Wednesday , December 13 2017
Home / مذہبی صفحہ / ام المومنین، حضرت سیدتنا خدیجہ الکبری رضی اللہ تعالیٰ عنہا

ام المومنین، حضرت سیدتنا خدیجہ الکبری رضی اللہ تعالیٰ عنہا

آپؓ کا اسم گرامی خدیجہ ہے ۔والد کا نام خویلد ہے، والدہ کا نام فاطمہ ہے۔
آپؓ کی ولادت باسعادت عام الفیل سے پندرہ (۱۵) سال پہلے ہوئی۔
نسبی شرف:نسب کے حوالے سے آپؓ کو یہ شرف حاصل ہے کہ سید عالم ﷺ کے چوتھے جد امجد حضرت قصی میں آپؓ کا نسب ملتا ہے۔ خدیجہ بنت خویلد بن اسد بن عبدالعزی بن قصی…الخ
کنیت: آپؓ کی کنیت ام القاسم ہے۔
القابات: آپؓ کے القابات کثیر ہیں، چند پیش خدمت ہیں:
الکبری : یہ سب سے زیادہ مشہور لقب ہے… سیدتہ قریش … صدیقہ
طاہرہ : دور جاہلیت میں ہی میں آپؓ کو طاہرہ کے لقب سے یاد کیا جاتا تھا۔
ام المومنین سیدہ خدیجہ الکبری رضی اللہ تعالیٰ عنہاکو اللہ رب العزت نے ان گنت خوبیوں اور بے مثال فضائل سے نوازا: آپؓ نے سب سے پہلے حرم مصطفی جان رحمت صلی اللہ علیہ و آلہٖ وسلم میں حاضر ہونے یعنی حضور صلی اللہ تعالیٰ علیہ والہ وسلم کے ساتھ رشتۂ زوجیت میں منسلک ہوئیں، اور قیامت تک کے مومنوں کی ماں ہونے کے اعلی اور پاکیزہ منصب پر فائز ہوئیں۔ عورتوں میں سب سے پہلے اسلام قبول کرنے کا شرف بھی آپ ؓنے پایا۔ (تاریخ الخلفاء للسیوطی)
آپؓ جب تک ظاہر حیات طیبہ تک حرم مصطفی صلی اللہ علیہ و آلہٖ وسلم میں رہیں، حضور صلی اللہ علیہ و آلہٖ وسلم نے دوسرا نکاح نہیں فرمایا۔ ( صحیح مسلم)
آپؓ کی عظیم ترین خوبیوں، اور سعادت عظمی کی معراج یہ بھی ہے کہ آپؓ سے کبھی بھی کوئی بھی ایسی بات سرزد نہیں ہوئی جس پر رحمت عالم ﷺ نے کبھی غضب فرمایا ہو۔ ( فتح الباری)

TOPPOPULARRECENT