Saturday , December 16 2017
Home / سیاسیات / انا ڈی ایم کے 18 ارکان اسمبلی نااہل ، عدالت سے رجوع ہونے باغیوں کا فیصلہ

انا ڈی ایم کے 18 ارکان اسمبلی نااہل ، عدالت سے رجوع ہونے باغیوں کا فیصلہ

چینائی ۔18 ستمبر۔( سیاست ڈاٹ کام) ٹاملناڈو میں چیف منسٹر کے پلانی سوامی اور نظرانداز شدہ لیڈر ٹی ٹی وی دیناکرن میں اقتدار کے لئے جاری رسہ کشی کے درمیان اسمبلی کے اسپیکر پی دھن پال نے آل انڈیا انا ڈی ایم کے کے 18 باغی ارکان اسمبلی کو آج نااہل قرار دیا۔ دیناکرن نے نااہلی کے فیصلہ کے خلاف ان کے حامی یہ ارکان اسمبلی عدالت سے رجوع ہوں گے ۔ باغیوں نے اسپیکر کے اس اقدام کو ’جمہوریت کا قتل ‘ قرار دیا ہے ۔ دیناکرن نے ضلع کانچی پورم میں اخباری نمائندوں سے کہاکہ ’’ہمارے ارکان اسمبلی عدالت سے رجوں ہوں گے اور انصاف حاصل کریں گے ‘‘ ۔ چیف منسٹر پلانی سوامی کے خلاف گزشتہ ماہ بغاوت کرنے والے 18 ارکان اسمبلی کو 1986 ء کے انسداد انحراف قانون کے تحت نااہل قرار دیا گیا ہے ۔ اسمبلی کے سکریٹری کے بھوپتی کی طرف سے جاری ایک بیان میں کہا گیا ہے کہ دستور کے 10 ویں جدول کے مطابق ان قواعد کے تحت ان ارکان کو نااہل قرار دیا گیا ہے ۔ بیان میں مزید کہا گیا کہ ’’معزز اسپیکر کی جانب سے 18 ستمبر 2017 ء کو نااہل قرار دیئے جانے کے بعد وہ تمام اب ایوان کی رکنیت سے محروم ہوگئے ہیں‘‘ ۔ اسپیکر کے فیصلہ کی مذمت کرتے ہوئے پیرمبور کے رکن اسمبلی ویئریویل نے کہاکہ ’’اقتدار پر فائز رہنے والوں کی جانب سے غلطیوں کے ارتکاب کی یہ انتہاء ہے ‘‘ ۔ وہ اس ریمارک کے ذریعہ بالواسطہ طورپر پلانی سوانی کا حوالہ دے رہے تھے ۔ انھوں نے کہاکہ اب یہ عدالت پر منحصر ہے کہ نااہلی کے جائز ہونے یا نہ ہونیکے بارے میں فیصلہ کرے ۔ ’’ہمارے مطابق یہ جائز نہیں ہے ‘‘ ۔

TOPPOPULARRECENT