Wednesday , December 12 2018

انتخابی مہمات کی تلخیوں کا دور ختم: مودی

نئی دہلی۔/13مئی، ( سیاست ڈاٹ کام ) اب جبکہ انتخابی مہمات میں ایک دوسرے پر تنقیدیں اور کیچڑ اچھالنے کا وقت ختم ہوگیا ہے، بی جے پی کے وزارت عظمیٰ کے امیدوار نریندر مودی نے کہا کہ انتخابی مہم کے دوران جو ہوا سو ہوا لیکن اب ہمیں ایک دوسرے سے جڑ جانا چاہیئے۔ عوام کا درجہ سیاست سے اوپر کا ہے۔ مایوسی کو امیدوں سے بدلنے، زخموں کو مرہم سے بدلنے،

نئی دہلی۔/13مئی، ( سیاست ڈاٹ کام ) اب جبکہ انتخابی مہمات میں ایک دوسرے پر تنقیدیں اور کیچڑ اچھالنے کا وقت ختم ہوگیا ہے، بی جے پی کے وزارت عظمیٰ کے امیدوار نریندر مودی نے کہا کہ انتخابی مہم کے دوران جو ہوا سو ہوا لیکن اب ہمیں ایک دوسرے سے جڑ جانا چاہیئے۔ عوام کا درجہ سیاست سے اوپر کا ہے۔ مایوسی کو امیدوں سے بدلنے، زخموں کو مرہم سے بدلنے، نہ چاہے جانے کو چاہے جانے اور خارج کرنے کو شامل کرنے سے تبدیل کئے جانے کی ضرورت ہے۔ یہ ایک فطری بات تھی کہ انتخابی مہم کے دوران ہر سیاسی پارٹی نے صرف اپنے لئے مہم چلائی۔ ایک دوسرے پر الزام تراشی کی، تنقیدیں کیں اور کیچڑ بھی اُچھالا ، لیکن اب وقت آگیا ہے کہ اس دور کو فراموش کردیا جائے۔

انتخابات مکمل ہوچکے ہیں اور اب ہمیں ایک دوسرے سے جڑ جانے کی ضرورت ہے۔ انہوں نے اپنے بلاگ پر تحریر کرتے ہوئے یہ بات کہی۔انہوں نے اعتراف کیا کہ حالیہ اختتام پذیر انتخابات بہت ہی سخت مقابلے سے رقم ہیں لیکن اب وہ سب نہیں چلے گا۔ 16مئی کو کون جیتے گا، کون ہارے گا، لیکن ہندوستان کی کروڑہا عوام کے خواب چکنا چور نہیں ہونے چاہیئے۔ انہوں نے کہا کہ مختلف سیاسی جماعتوں کے نظریات مختلف ہوسکتے ہیں لیکن مقصد سب کا ایک ہے اور وہ ہے ہندوستان کے لئے کام کرتے ہوئے ملک کے نوجوانوں کے خوابوں کی تکمیل۔ انہوں نے اس بات پر مسرت کا اظہار کیا کہ این ڈی اے اپنے ایجنڈہ پر عمل پیرا رہا۔ انتخابات مثبت مدعوں کی بنیاد پر لڑے جاتے ہیں اور اسی طرح این ڈی اے نے اپنے مثبت مدعوں کا ایجنڈہ کچھ اس انداز سے تیار کیا کہ عوام کو پارٹیوں کے انتخاب میں آسانی ہوئی۔ ایسی پارٹیاں جو این ڈی اے کا حصہ ہیں۔

TOPPOPULARRECENT