Thursday , November 23 2017
Home / اضلاع کی خبریں / اندرا پارک حیدرآباد میں آج کنٹراکٹ لیکچررس کا مہا دھرنا

اندرا پارک حیدرآباد میں آج کنٹراکٹ لیکچررس کا مہا دھرنا

نارائن پیٹ میں ضلعی نائب صدر حافظ چاند پاشاہ کا صحافتی بیان

نارائن پیٹ۔ 27 ڈسمبر (سیاست ڈسٹرکٹ نیوز) ریاستی حکومت کی جانب سے گورنمنٹ جونیر کالج کے کنٹراکٹ لیکچررس کی تنخواہوں میں 50% اضافہ کے فیصلے کو مسترد کرتے ہوئے گورنمنٹ جونیر کالج کے کنٹراکٹ لیکچررس اسوسی ایشن 475 کے ضلعی نائب صدر جناب حافظ چاند پاشاہ نے اپنے ایک صحافتی بیان میں بتایا کہ یہ کنٹراکٹ لیکچررس کے ساتھ ناانصافی اور حق تلفی کے مترادف ہے۔ انہوں نے بتایا کہ نویں پی آر سی کے مطابق کنٹراکٹ لیکچررس کو 18,000 روپئے ماہانہ تنخواہ دی جارہی ہے اور دسویں پی آر سی کے مطابق 37,000 روپئے دی جانی چاہئے تھی تاہم حکومت تلنگانہ نے صرف 27,000 روپئے تنخواہ دیئے جانے کا اعلان کرتے ہوئے احکامات جاری کئے ہیں جو سراسر ناانصافی اور کنٹراکٹ لیکچررس کے ساتھ حق تلفی کے مترادف ہے۔ انہوں نے حکومت پر الزام عائد کیا کہ وہ دو رخی رویہ اختیار کئے ہوئے ہے۔ ایک طرف کنٹراکٹ ملازمین کی خدمات کو باقاعدہ بنائے جانے کا وعدہ کیا جاتا ہے اور دوسری طرف اقل ترین تنخواہیں دینے سے بھی گریز کیا جارہا ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ حکومت کے اس فیصلے کے خلاف 28 ڈسمبر کو گورنمنٹ کنٹراکٹ لیکچررس اسوسی ایشن کی جانب سے اندرا پارک حیدرآباد میں ’’مہا دھرنا‘‘ پروگرام منظم کیا جارہا ہے جس میں تلنگانہ کے 31 اضلاع سے تمام کنٹراکٹ لیکچررس شرکت کریں گے اور توقع ہے کہ قانون ساز کونسل اور قانون ساز اسمبلی کے اراکین کے علاوہ دیگر تنظیموں کے ریاستی قائدین بھی اس میں شرکت کریں گے۔ انہوں نے تمام کنٹراکٹ لیکچررس سے کثیر تعداد میں شرکت کی اپیل کی ہے۔

TOPPOPULARRECENT