Wednesday , December 12 2018

اندرون 20یوم علحدہ ریاست تلنگانہ کی تشکیل یقینی

سنگاریڈی ۔ 3فبروری( سیاست ڈسٹرکٹ نیوز) راجیہ سبھا انتخابات میں ٹی آر ایس امیدوار کے کیشو راؤ کی کامیابی یقینی ہے جبکہ اندرون 20یوم علحدہ ریاست تلنگانہ کا قیام عمل میں آئے گا ۔ ان خیالات کا اظہار رکن پارلیمان پداپلی وویک نے آئی بی گیسٹ ہاؤز سنگاریڈی میں منعقدہ ایک پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کیا ۔ انہوں نے کہا کہ چیف منسٹر کرن کمار

سنگاریڈی ۔ 3فبروری( سیاست ڈسٹرکٹ نیوز) راجیہ سبھا انتخابات میں ٹی آر ایس امیدوار کے کیشو راؤ کی کامیابی یقینی ہے جبکہ اندرون 20یوم علحدہ ریاست تلنگانہ کا قیام عمل میں آئے گا ۔ ان خیالات کا اظہار رکن پارلیمان پداپلی وویک نے آئی بی گیسٹ ہاؤز سنگاریڈی میں منعقدہ ایک پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کیا ۔ انہوں نے کہا کہ چیف منسٹر کرن کمار ریڈی ایک بے ایمان شخص ہیں کیونکہ انہوں نے تلنگانہ مسودہ بل سے متعلق بے ایمانی کی ہے اور کرن کمار ریڈی چیف منسٹر کے عہدے پر فائز رہ کر جھوٹ کا سہارا لیتے ہوئے تشکیل تلنگانہ میں جگہ جگہ رکاوٹ بننے کی کوشش کررہے ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ اندرون 20یوم علحدہ ریاست تلنگانہ کا قیام ہوکر رہے گا ۔ چیف منسٹر کی جانب سے صدر جمہوریہ کو تحریر کئے جانے والے مکتوب سے کچھ ہونے والا نہیں ہے ۔ مرکزی حکومت کی جانب سے تشکیل تلنگانہ کی تمام تر تیاریاں مکمل ہوچکی ہیں اور یو پی اے کی حلیف تمام جماعتوں کی تائید سے ہی علحدہ ریاست تلنگانہ کی تشکیل عمل میں آئے گی ۔ انہوں نے کہا کہ بی جے پی کی مخالفت کے باوجود بھی پارلیمنٹ میں تلنگانہ کامیاب ہوکر رہے گا ۔ کرن کمار ریڈی چیف منسٹر کے عہدے پر فائز رہتے ہوئے صرف سیما آندھرا کی ہی بات کررہے ہیں اور اپنی ترقی کیلئے کام انجام دیئے جبکہ عوامی فلاح و بہبود پر کبھی توجہ نہیں دی ۔

چیف منسٹر تشکیل تلنگانہ میں تعاون کے بجائے مخالفت کرتے ہوئے ادھر تلنگانہ اور ادھر سیما آندھرا میں کانگریس پارٹی کو نقصان پہنچا رہے ہیں اور دہلی میں پارٹی ہائی کمان کو بھی گمراہ کرنے کی کوشش کررہے ہیں ۔ رکن پارلیمان وویک نے چیف منسٹر کو ان کے عہدے سے فوری برطرف کرنے کا مطالبہ کیا اور کہا کہ اب علحدہ ریاست تلنگانہ کی تشکیل کیلئے جدوجہد آخری مرحلے میں ہے ۔ ایک سوال کے جواب میں رکن پارلیمان وویک نے کہاکہ میں تشکیل تلنگانہ کے بعد چیف منسٹر کی دوڑ میں شامل نہیں ہوں اور آئندہ پارلیمانی انتخابات میں حلقہ پارلیمان پداپلی سے دوبارہ مقابلہ کرنے کا اظہار کیا ۔ گذشتہ 13سالوں سے کے سی آر علحدہ ریاست تلنگانہ کے قیام کیلئے انتھک جدوجہد جاری رکھے ہوئے ہیں ۔ امیدہیکہ اسی ماہ فبروری میں علحدہ ریاست تلنگانہ کی تشکیل ہوکر رہے گی ۔ انہوں نے راجیہ سبھا انتخابات میں ٹی آر ایس امیدوار کے کیشو راؤ کی کامیابی کو یقینی قرار دیا ۔ اس موقع پر چنتا پربھاکر انچارج ٹی آر ایس حلقہ اسمبلی سنگاریڈی ‘ وینکٹیشورلو‘ سرینواس چاری ‘ مہیش تیواری اور درگیش یادو و دیگر ٹی آر ایس قائدین موجود تھے ۔

TOPPOPULARRECENT