Thursday , September 20 2018
Home / شہر کی خبریں / انسداد ذیابیطس کیلئے غذاء پر کنٹرول ضروری

انسداد ذیابیطس کیلئے غذاء پر کنٹرول ضروری

مڈون ہاسپٹل میں ذیابیطس کلینک کا افتتاح ، انوراگ شرما اور دیگر کا خطاب

مڈون ہاسپٹل میں ذیابیطس کلینک کا افتتاح ، انوراگ شرما اور دیگر کا خطاب
حیدرآباد۔20نومبر(سیاست نیوز) ہندوستان کاشمار دنیا کے ان ممالک میں ہوتا ہے جہاں پر ذیابیطس کا مرض تیزی کے ساتھ پھیل رہا ہے اور اس مرض کی روک تھام کے لئے اٹھائے جانے والے اقدامات میں سب سے اہم غذا پر کنٹرول ہے۔ ریاست تلنگانہ کے ڈی آئی جی مسٹر انورا گ شرما نے میڈون ہاسپٹل کی نگرانی میںشروع کردہ ’’ذیابیطس کلینک کی افتتاحی تقریب سے خطاب کے دوران یہ بات کہی۔ جناب محمد علی رفعت ائی اے ایس ( ریٹائرڈ)‘ مسٹر وی سرینواسن چیف جنرل مینجر بی ایس این ایل‘ کے علاوہ ڈاکٹر فراز فرشتہ نے اس تقریب سے خطاب کیا ۔ قبل ازیں مسٹر انوراگ شرما نے ذیابیطس رن کو بھی ہری جھنڈی دیکھائی جس کا آغازمیڈون ہاسپٹل سے ہوا ۔انہوں نے کہاکہ انسان کی بڑھتی مصروفیت کے سبب تھکن اور تنائو میں اضافہ ہوتا جار ہا ہے ۔تھکن اور تنائو کو نظر انداز کرنا گویا دیگر امراض کو دعوت دینا ثابت ہورہا ہے۔ مصروف ترین اوقات میں کھانے پر توجہہ دینے میںکوتاہی کے سبب مختلف امراض پیدا ہورہے ہیں جو ذیابیطس کی شکل اختیار کرکے انسان کو کمزور بنارہا ہے۔ انہوں نے میڈون ہاسپٹل کی جانب سے متعارف کئے گئے ذیابیطس کلینک کو وقت کی اہم ضرورت قراردیتے ہوئے کہاکہ ذیابیطس کی ابتدائی مراحل میں نشاندہی کے ذریعہ مریض کے لئے موثر غذائوں کی نشاندہی ذیابیطس کے مرض کو پھیلنے سے روکنے کاکام کرے گا۔انہوں نے کہاکہ ذیابیطس کے مرض سے مقابلے اور علاج و معالجہ کے لئے میڈون ہاسپٹل کے منفرد طریقے کار کو عوام تک پہنچانے کی ضرورت ہے تاکہ عوام میں ذیابیطس کے مرض سے مقابلے کے متعلق شعور بیدار کیا جاسکے۔مسٹر انوراگ شرما نے کہاکہ ذیابیطس کے متعلق غذائوں کی نشاندہی اور میڈون ہاسپٹل کے علاج ومعالجہ کے نئے طریقے کار کو پیرامیڈیکل کورسس میں شامل کرتے ہوئے پیرا میڈیکل طلبہ وطالبات کو تربیت دی جانی چاہئے۔جناب محمد علی رفعت نے کہا کہ میڈون ہاسپٹل کی جانب سے طبی شعبہ میں اصلاحات کے ذریعہ ذیابیطس کے علاج کا نیا طریقہ کار قابلِ ستائش اقدام ہے ۔ جناب محمد علی رفعت نے قلب شہر میں ذیابیطس کلینک کے قیام کو میڈون ہاسپٹل کا بڑا کارنامہ قراردیا اور کہاکہ اس قسم کا کلنک وقت کی اہم ضرورت بھی تھاانہوں نے میڈون ہاسپٹل انتظامیہ کے لئے نیک تمنائوں کا اظہار کیا۔ مسٹر وی سرینواسن نے کہاکہ پچیس ہزار سے زائد بی ایس این ایل تلنگانہ اور آندھرا ریاستوں میںخدمات انجام دے رہے ہیں جن کی صحت کا خیال رکھنے کے لئے بی ایس این ایل انتظامیہ سالانہ چالیس تا پینتالیس کروڑ روپئے کا خرچ آتا ہے جس کا بڑا حصہ بی ایس این ایل ملازمین کے علاج و معالجہ پر خرچ کیا جاتا ہے جو ایک عام شہری کے لئے مشکل ہے۔ انہوں نے کہاکہ بڑھتی مہنگائی بالخصوص مہنگے علاج کے دور میں میڈون ہاسپٹل انتظامیہ نے کفایت بخش اور موثر طریقہ کار اپناتے ہوئے ذیابیطس کے علاج کی جو سہولتیں فراہم کی ہیں وہ ایک قابل ستائش اقدام ہے۔ ڈاکٹر فراز فرشتہ نے کہاکہ ابتدائی مراحل میں ذیابیطس کی نشاندہی کے بعد مریض کے لئے غذائوں کی تجویز ذیابیطس مرض کی روک تھام میں مددگارثابت ہوگی۔ انہوں نے کہاکہ میڈون ہاسپٹل کے ذیابیطس کلینک کے ذریعہ ایسے مریضوں کو غذائوں پر مشتمل ایک چار ٹ بھی فراہم کیاجائے گا جو ذیابیطس مریضوں کے لئے دواء کاکا م کریگا۔ ڈاکٹر سمیع اللہ خان نے تقریب کی کاروائی چلائی اور میڈون ہاسپٹل انتظامیہ کی جانب سے مسٹر انوراگ شرما‘ جناب محمد علی رفعت او ردیگر مہمانوں کو تہنیت اس موقع پر پیش کی گئی۔

TOPPOPULARRECENT