Wednesday , September 26 2018
Home / شہر کی خبریں / انفارمیشن ٹکنالوجی انویسٹمنٹ ریجن کے قیام کی تجویز

انفارمیشن ٹکنالوجی انویسٹمنٹ ریجن کے قیام کی تجویز

ایچ ایم ڈی اے کو کئی فرمس کی تجاویز موصول ‘ فنی بولیوں کا عنقریب جائزہ لیا جائیگا

ایچ ایم ڈی اے کو کئی فرمس کی تجاویز موصول ‘ فنی بولیوں کا عنقریب جائزہ لیا جائیگا
حیدرآباد 6 مارچ ( سیاست نیوز) انفارمیشن ٹکنالوجی انویسٹمنٹ ریجن ( آئی ٹی آئی آر ) کے مجوزہ منصوبہ کیلئے علیحدہ ماسٹر پلان اور ایک اراضی کے استعمال کے منصوبہ کی تجویز کے پیش نظر کئی ایجنسیوں نے حیرآباد میٹروپولیٹن ڈیولپمنٹ اتھاریٹی کی جانب سے طلب کردہ تجاویز روانہ کی ہیں۔ انفارمیشن ٹکنالوجی انویسٹمنٹ ریجن 202 مربع کیلومیٹر کے علاقہ پر حیدرآباد میٹرو پولیٹن علاقہ کے اطراف میں قائم کرنے کی تجویز ہے ۔ کہا گیا ہے کہ جن کنسلٹنٹس کی خدمات حاصل کی جا رہی ہیں انہیں آئی ٹی آئی آر کیلئے جی آئی ایس فارمٹ میں تفصیلی ماسٹر پلان تیار کرنے کی ضرورت ہے اور اس میں معاشی امور کے علاوہ فنڈنگ ‘ حصول اراضی ‘ طبعی و سماجی انفرا اسٹرکچر اور تمام آمدنی گروپس والوں کیلئے ہاوزنگ کی سہولتوں کا بھی خیال رکھنا ہوگا ۔ کہا گیا ہے کہ جملہ 202 مربع کیلومیٹر علاقہ میں 41 فیصد یعنی 82.4 مربع کیلومیٹر کا علاقہ پروسیسنگ علاقہ قرار دیا جائیگا جہاں آ:ی ٹی دفاتر کی جگہ ہوگی ۔ اس میں گرین فیلڈ علاقہ 76.9 مربع کیلومیٹر ہوگا جبکہ براؤن فیلڈ علاقہ 5.5 مربع کیلومیٹر ہوگا جس میں موجودہ آ:ی ٹی علاقوں مادھا پور ‘ گچی باؤلی اور نانک رام گوڑہ کا بھی احاطہ کیا جائیگا ۔ ایچ ایم ڈی اے کے سرکاری ذرائع کے بموجب جن فرمس نے تجاویز روانہ کی ہیں ان میں ایل ای اے اسوسی ایٹس ساؤتھ ایشیا پرائیوٹ لمیٹیڈ ‘ اے ای کام انڈیا پرائیوٹ لمیٹیڈ ‘ آر وی اسوسی ایٹس آرکٹیکٹ ‘ انجینئرس و کنسلٹنٹس پرائیوٹ لمیٹیڈ ‘ ڈبلیو ایس اٹکنس ( انڈیا ) پرائیوٹ لمیٹیڈ ‘ فیڈ بیاک انفرا پرائیوٹ لمیٹیڈ اور بی ڈی پی بلڈنگ ڈیزائین پارٹنر شپ شامل ہیں۔ ایم ڈی اے اب ان فرمس کی فنی بولیوں کا جائزہ لے گا اور جن کی فنی بولیاں درست قرار پائیں گی ان کی معاشی بولیوں کو کھولا جائیگا ۔ جن فرمس کو معاشی بولیوں کی اساس پر اہل قرار دیا جائیگا ان کیلئے کام شروع کرنے کے احکام بھی جاری کردئے جائیں گے ۔ منتخبہ فرم کو چھ ماہ کے وقت میں اپنا منصوبہ تیار کرنا ہوگا ۔ گذشتہ سال کابینی کمیٹی برائے معاشی امور نے حیدرآباد میٹرو پولیٹن علاقہ کے اطراف انفارمیشن ٹکنالوجی انویسٹمنٹ ریجن کے قیام کی ریاستی حکومتک ی تجویز کو منظوری دیدی تھی ۔ اس علاقہ کے تحت سائبر آباد ڈیولپمنٹ اتھاریٹی بشمول گچی باؤلی اور مادھا پور کے علاوہ حیدرآباد ائرپورٹ ڈیولپمنٹ اتھاریٹی بشمول مامڈی پلی ‘ راوریال ‘ آدی بٹلہ ‘ مہیشورم ‘ اپل ‘ پوچارم اور دوسرے علاقوں کا احاطہ کیا جائیگا ۔ اس آئی ٹی سرمایہ کاری علاقہ کو موجودہ آئی ٹی / آئی ٹی ای ایس / ای ایچ ایم سے بھی مربوط رکھا جائیگا ۔ آئی ٹی آئی ٹی آئی آر علاقہ کے براونڈ فیلڈ کو ترقی دینے کے معاملہ میں آئی ٹی / آئی ٹی ای ایس شعبہ سے تعلق رکھنے والی بڑی کمپنیوں اور اداروں نے دلچسپی کا اظہار کیا ہے ۔ ماسٹر پلان ‘ اراضی کے استعمال کے منصوبہ اور انویسٹمنٹ پلان میں ڈیموگرافک ‘ سماجی و معاشی صورتحال ‘ طبعی اور سماجی انفرا اسٹرکچر اور ماحولیات جیسے امور کا وسیع تر جائزہ شامل رہے گا ۔ جس ایجنسی کو اس کام کیلئے منتخب کیا جائیگا اس کو تمام فریقین جیسے ضلع منصوبہ بندی بورڈز ‘ منڈل و پنچایت عہدیداروں ‘ ٹی ایس ایس آر ٹی سی ‘ سی ڈی ایم اے ‘ ڈی ٹی سی پی ‘ ایچ ایم ڈی اے ‘ ٹی ایس آئی آئی سی ‘ محکمہ آبپاشی ‘ محکمہ مال اور دوسرے محکموں بشمول حکومت تلنگانہ ‘ مرکزی حکومت کے محکمہ جات سے بھی مشاورت کرنی ہوگی ۔

TOPPOPULARRECENT