Thursday , January 18 2018
Home / Top Stories / اننت پور میں آر ٹی سی بس کا خوفناک حادثہ، 16مسافرین ہلاک، 30زخمی

اننت پور میں آر ٹی سی بس کا خوفناک حادثہ، 16مسافرین ہلاک، 30زخمی

اننت پور؍ حیدرآباد۔/7جنوری، (سیاست نیوز ) آر ٹی سی بس کے خطرناک حادثہ میں تقریباً 16افراد ہلاک اور 30دیگر زخمی ہوگئے۔ یہ حادثہ ضلع اننت پور میں پینو کونڈہ سے تقریباً 15کلو میٹر دور پیش آیا جہاں بس سڑک سے 60فیٹ نیچے گرپڑی۔ ’ پلے ویلگو‘ بس جس کا رجسٹریشن نمبر AP28Z-1053 ہے، اس میں 68مسافرین سوار تھے ان میں اکثریت طلبہ کی تھی جو اپنے کالجس جارہے

اننت پور؍ حیدرآباد۔/7جنوری، (سیاست نیوز ) آر ٹی سی بس کے خطرناک حادثہ میں تقریباً 16افراد ہلاک اور 30دیگر زخمی ہوگئے۔ یہ حادثہ ضلع اننت پور میں پینو کونڈہ سے تقریباً 15کلو میٹر دور پیش آیا جہاں بس سڑک سے 60فیٹ نیچے گرپڑی۔ ’ پلے ویلگو‘ بس جس کا رجسٹریشن نمبر AP28Z-1053 ہے، اس میں 68مسافرین سوار تھے ان میں اکثریت طلبہ کی تھی جو اپنے کالجس جارہے تھے۔ یہ بس مداکسیرا۔ پینو کونڈہ روٹ پر چلائی جارہی تھی کہ آج صبح حادثہ کا شکار ہوگئی۔ ابتدائی تحقیقات کے مطابق بس ڈرائیور مخالف سمت سے آنے والے تیز رفتار آٹو کو تنگ موڑ پر بچانے کی کوشش میں قابو کھو بیٹھا جس کے نتیجہ میں بس 60فیٹ گہرائی میں گرپڑی۔

صبح کے وقت کہر کی وجہ سے راستہ صاف دکھائی نہیں دے رہا تھا۔ مسافرین ایک دوسرے پر گر پڑے اور یہ حادثہ اس قدر شدت کا تھا کہ 9افراد برسر موقع ہلاک ہوگئے جبکہ مابقی زخمی مختلف ہاسپٹلس میں جانبر نہ ہوسکے۔ مہلوکین میں بس ڈرائیور گنگپا بھی شامل ہے جس کی ہاسپٹل میں دوران علاج موت واقع ہوگئی۔ اس کے علاوہ ایک فاریسٹ گارڈ بھی ہلاک ہوگیا۔ مہلوکین کی تعداد میں اضافہ کا اندیشہ ہے کیونکہ کئی زخمی مسافرین کی حالت تشویشناک بتائی گئی ہے۔ حادثہ کی اطلاع ملتے ہی پولیس، ضلع عہدیداران، ڈاکٹرس اور ایمبولنس کی ٹیم کے ساتھ یہاں پہنچ گئے۔ بڑے پیمانے پر بچاؤ اور راحت کاری کام شروع کردیا گیا۔ زخمیوں کو فوری ہندو پور اور بنگلور کے ہاسپٹلس منتقل کیا گیا۔ حادثہ کے مقام پر مہلوکین کے عزیز و اقارب بھی پہنچ گئے تھے اور غم و اندوہ کا ماحول چھایا ہوا تھا۔ لوگ اپنے عزیزوں کی موت پر آہ و بکا کررہے تھے۔

اس دوران چیف منسٹر این چندرا بابو نائیڈو نے جو اسوقت وجئے واڑہ میں کلکٹرس کے ساتھ اجلاس میں موجود تھے، حادثہ کی اطلاع ملتے ہی سرکاری مشنری کو فوری چوکس کردیا۔ انہوں نے حکام کو ہدایت دی کہ زخمیوں کو بروقت طبی سہولتیں فراہم کی جائیں۔ اس کے علاوہ مہلوکین کو فی کس 5لاکھ روپئے ایکس گریشیا کا بھی اعلان کیا۔ چیف منسٹر کی زیر قیادت اجلاس میں بطور سوگ دو منٹ کی خاموشی منائی گئی۔حادثہ کا شکار ہونے والے مسافرین میں اکثریت انٹر میڈیٹ طلبہ کی بتائی گئی ہے۔

آندھرا پردیش کے وزراء ایس رگھورام، پی رگھو ناتھ ریڈی اور پی سنیتا فوری مقام حادثہ پہنچ گئے اور راحت کاری کاموں کی نگرانی کی۔ ضلع پریشد صدر نشین چمن صاحب، پینو کونڈہ رکن اسمبلی پارتھا سارتھی، دھرما ورم رکن اسمبلی سوریا نارائنہ، مداکسیرا رکن اسمبلی ایرنے، ایم ایل سی تھپی سوامی اور دیگر نے فوری مقام حادثہ کا دورہ کیا اور مہلوکین کے ارکان خاندان سے تعزیت کا اظہار کیا۔ انہوں نے آخری رسومات کیلئے ہر خاندان کو فی کس 10ہزار روپئے کی رقم بھی حوالے کی۔ اس دوران وزیر داخلہ آندھرا پردیش چنا راجپا نے سپرنٹنڈنٹ پولیس کو حادثہ کی تحقیقات اور رپورٹ پیش کرنے کی ہدایت دی ہے۔ صدر وائی ایس آر کانگریس وائی ایس جگن موہن ریڈی حادثہ کی اطلاع ملتے ہی مداکسیرا پہنچ گئے جہاں انہوں نے راحت کاری کاموں کی نگرانی کی اور مہلوکین کے ورثاء سے تعزیت کا اظہار کیا۔ انہوں نے حادثہ پر برہمی اور صدمہ کا اظہار کرتے ہوئے حکومت سے تحقیقات اور زخمیوں کو موثر طبی علاج کی فراہمی کا مطالبہ کیا۔ انہوں نے کہا کہ اس حادثہ میں بس ڈرائیور کی لاپرواہی کے ساتھ ساتھ بسوں کی خستہ حالت اور ناقص دیکھ بھال کا بھی اندازہ کیا جاسکتا ہے۔تنگ راستوں کی کشادگی کے علاوہ ایسے مقامات پر ٹریفک کے بارے میں موثر اقدامات بھی ضروری ہیں۔

صدر، وزیر اعظم اور گورنر کا اظہار افسوس
حیدرآباد۔/7جنوری، ( این ایس ایس ) صدر جمہوریہ پرنب مکرجی، وزیر اعظم نریندر مودی نے بس حادثہ میں جانی نقصان پر گہرے دکھ کا اظہار کیا ہے۔وزیر اعظم کے دفتر نے ٹوئٹر پر لکھا ہے کہ اننت پور میں پیش آئے حادثہ پر وزیر اعظم کو کافی دکھ ہے اور انہوں نے مہلوکین کے ورثاء سے تعزیت کا اظہار کیا ہے۔ گورنر ای ایس ایل نرسمہن نے بھی اس حادثہ پر افسوس کا اظہار کیا۔اس کے علاوہ اسمبلی میں قائد اپوزیشن وائی ایس جگن موہن ریڈی، سابق مرکزی وزیر چرنجیوی، ہندو پور کے رکن اسمبلی این بالا کرشنا اور دیگر قائدین نے حادثہ کو افسوسناک قرار دیا۔

TOPPOPULARRECENT