Saturday , May 26 2018
Home / شہر کی خبریں / انٹرمیڈیٹ شناختی فیس 200 روپئے ، جی ایس ٹی کا اثر

انٹرمیڈیٹ شناختی فیس 200 روپئے ، جی ایس ٹی کا اثر

حیدرآباد۔ 16 نومبر (سیاست نیوز) انٹرمیڈیٹ طلبہ کی جانب سے ادا کی جانے والی 85 روپئے شناختی فیس میں اضافہ کرتے ہوئے انٹرمیڈیٹ بورڈ نے 200 روپئے کردیا ہے۔ یہی فیس 2007-08ء میں 75 روپئے تھی جسے 85 روپئے کیا گیا تھا۔ بعدازاں ہر سال 10 روپئے کا اضافہ نہیں کیا گیا۔ اس مناسبت سے 200 روپئے فیس مقرر کرنے کا انٹر بورڈ سیکریٹری اشوک نے اعلان کیا ہے۔ ریاست میں انہوں نے ایک پریس نوٹ جاری کرتے ہوئے وضاحت کی کہ جی ایس ٹی لاگو ہونے کے بعد اِسٹیشنری وغیرہ کی قیمتوں میں اضافہ کی وجہ سے انٹر بورڈ طلبہ کی فیس میں اضافہ کا فیصلہ کیا گیا۔ ریاست میں گروکل کالجس، ماڈل اسکولس ، قبائیلی بہبود گروکل کالجس ، ایڈیڈ، اَن ایڈیڈ، پرائیویٹ کالجس نے 2017-18ء تعلیمی سال کیلئے 60% شناختی فیس ادا کئے ہیں اور اس فیس کا استعمال طلبہ کے داخلوں سے متعلق ڈاٹا نامینل رولس کی تیاری، کالجس کی آن لائن سرویسیس، سی جی جی اور دیگر اُمور کیلئے استعمال کی جائے گی۔اسپاٹ والویشن کیمپس کے انعقاد، امتحانات کے نتائج کیلئے درکار کمپیوٹرس کے آلات اور دیگر ضروری اشیاء کے اخراجات میں اضافہ ہوا ہے۔ انہوں نے کالجس کے انتظامیہ سے خواہش کی کہ طلبہ کی جانب سے ادا کی گئی شناختی اور امتحانی فیس بروقت بورڈ کو ادا کردیں۔

 

تلنگانہ کیلئے علیحدہ لوک آیوکت
حیدرآباد۔ 16 نومبر (سیاست نیوز) اسمبلی میں تلنگانہ لوک آیوکت ترمیمی بل کو منظور کیا گیا ہے۔ ریاست تلنگانہ کیلئے علیحدہ لوک آیوکت قائم کرنے چیف منسٹر کی جانب سے وزیر عمارات و شوارع نے بل پیش کیا۔ آندھرا پردیش تقسیم قانون شیڈول 10 کے تحت یہ بل منظور کیا گیا ہے۔ اسمبلی میں تلنگانہ چیاریٹیبل اور ہندو مذہبی اداروں اور انڈومنٹس قانون 1987ء کو بھی منظوری دی گئی ہے۔

TOPPOPULARRECENT