Monday , June 25 2018
Home / ہندوستان / انڈسٹریل پراجکٹس کو 12ہفتوں کے اندر سیکیورٹی منظوری

انڈسٹریل پراجکٹس کو 12ہفتوں کے اندر سیکیورٹی منظوری

نئی دہلی ۔14ستمبر ( سیاست ڈاٹ کام) انڈسٹریل اور انفراسٹرکچر پراجکٹس تجاویز کو وزارت داخلہ کی جانب سے 12ہفتوں کے اندر سیکیورٹی منظوری حاصل ہوجائے گی ۔ وزارت داخلہ نے اس سلسلہ میں تفصیلی رہنمایانہ خطوط جاری کئے ہیں ۔ یہ فیصلہ نریندر مودی حکومت کی ایف ڈی آئی پالیسی کے حصہ کے طور پر کیا گیا ہے ۔ ملک میں زیادہ سے زیادہ صنعتیں قائم کرنے اور

نئی دہلی ۔14ستمبر ( سیاست ڈاٹ کام) انڈسٹریل اور انفراسٹرکچر پراجکٹس تجاویز کو وزارت داخلہ کی جانب سے 12ہفتوں کے اندر سیکیورٹی منظوری حاصل ہوجائے گی ۔ وزارت داخلہ نے اس سلسلہ میں تفصیلی رہنمایانہ خطوط جاری کئے ہیں ۔ یہ فیصلہ نریندر مودی حکومت کی ایف ڈی آئی پالیسی کے حصہ کے طور پر کیا گیا ہے ۔ ملک میں زیادہ سے زیادہ صنعتیں قائم کرنے اور روزگار پیدا کرنے کیلئے معاشی اقدامات کئے جارہے ہیں ۔

چین سرحد پر جوں کاتوں موقف رکھنے کا خواہاں
ہندوستان کی خارجہ پالیسی میں تبدیلیوں سے استفادہ کیلئے کوشاں
نئی دہلی۔14ستمبر ( سیاست ڈاٹ کام ) چین ہندوستان کے ساتھ سرحدی مسئلہ کو جوں کا توں موقف کے ساتھ برقرار رکھنے کا خواہاں ہے ۔ آج یہاں جاری کردہ ایک نئی کتاب میں بتایا گیا کہ چین سرحدی مسائل اُس وقت تک حل کرنا نہیں چاہتا تاوقتیکہ ہندوستان اپنا عالمی نظریہ مکمل طور پر اس کے سامنے رکھ دیں اور وہ حدود رہ کر بات چیت کرنے کیلئے تیار ہوجائے۔ سابق سفیر و سفارتکار رنجیت سنگھ کلہا نے اپنی کتاب میں لکھا ہے کہ چین کی جانب سے سرحدی تنازعہ کا استعمال کرتے ہوئے ہندوستان کی بدلتی خارجہ پالیسیوں سے استفادہ کرنے کی کوشش کررہا ہے ۔ رنجیت سنگھ مرکزی وزارت خارجہ میں سابق سکریٹری تھے ۔ انہوں نے 1985 اور 1988ء کے درمین سرحدی ذیلی گروپ میں ہندوستانی مذاکراتی ٹیم کے سربراہ کی حیثیت سے خدمت انجام دی تھی ۔ ان کا کہنا ہے کہ چین حقیقی خطہ قبضہ پر دراندازی کے خطرات کو بڑھارہا ہے ۔ ہند۔چین سرحدی تنازعہ کا حل نہ صرف ٹکنیکل معاملہ ہے بلکہ ایک سیاسی اور حکمت عملی کا مسئلہ ہے جس کو باہمی تعلقات کے علاوہ آگے بڑھ کر حل کیا جانا ضروری ہے ۔

TOPPOPULARRECENT