Tuesday , December 12 2017
Home / کھیل کی خبریں / انگلینڈ۔ پاکستان تیسرا ونڈے ، کئی ریکارڈز ٹوٹ گئے

انگلینڈ۔ پاکستان تیسرا ونڈے ، کئی ریکارڈز ٹوٹ گئے

لندن ، 31 اگسٹ (سیاست ڈاٹ کام) انگلینڈ اور پاکستان کے درمیان ناٹنگھم میں کھیلے گئے تیسرے ایک روزہ میچ میں فتح کی بدولت سیریز جیتنے کے ساتھ ساتھ میزبانوں نے کئی عالمی ریکارڈ پاش پاش کر دیئے۔ انگلینڈ نے تیسرے ونڈے میں 444/3 بنا کر ایک روزہ کرکٹ کی تاریخ کا سب سے بڑے اسکور کا عالمی ریکارڈ اپنے نام کر لیا۔ دس سال قبل سری لنکا نے نیدرلینڈز کے خلاف 443 رنز بنا کر یہ ریکارڈ قائم کیا تھا۔ پاکستان کے خلاف سب سے بڑا اسکور جنوبی افریقہ کا تھا جنہوں نے 2006ء میں 392 رنز بنائے تھے۔ الیکس ہیلز (171 رنز) انگلینڈ کیلئے سب سے زیادہ انفرادی رنز بنانے والے بن گئے ہیں۔ روبن اسمتھ نے 1993ء میں آسٹریلیا کے خلاف 167 رنز کی اننگز کھیلی تھی۔ جوز بٹلر کی 22 گیندوں میں نصف سنچری  انگلینڈ تیز ترین ففٹی ہوگئی۔ یہ اعزاز پال کولنگ ووڈ (24 گیندیں) کے نام تھا۔ انگلینڈ نے 46.2 اوورز میں 400 رنز مکمل کر کے 400 رنز تک تیز ترین رسائی کا ریکارڈ برابر کردیا۔ ویسٹ انڈیز نے آسٹریلیا کے خلاف اتنی ہی گیندوں میں 400 رنز بنائے تھے۔ جو روٹ اور ہیلز نے دوسری وکٹ کیلئے 248 رنز بنا کر پاکستان کے خلاف کسی بھی وکٹ کیلئے سب سے بڑی شراکت کا ریکارڈ بنا دیا۔ ہاشم آملہ اور اے بی ڈی ویلیئرز نے 2013ء میں جوہانسبرگ میں  238 رنز بنا کر یہ ریکارڈ قائم کیا تھا۔ وہاب ریاض نے میچ میں 110 رنز کی پٹائی برداشت کی اور یوں وہ او ڈی آئی میں سو رنز دینے والے پاکستانی بولر بن گئے بلکہ ونڈے کرکٹ کی تاریخ کے دوسرے مہنگے ترین بولر بھی بنے۔ مک لوئس کو وانڈررز میں 113 رنز پڑے تھے۔ انگلینڈ نے میچ میں 59 باؤنڈریز(43 چوکے اور 16 چھکے) کے ساتھ ونڈے میچ میں زیادہ باؤنڈریز کا سری لنکا کا ریکارڈ برابر کردیا۔ پاکستان کے محمد عامر نے گیارہویں نمبر پر کھیلتے ہوئے سب سے زیادہ رنز بنانے کا عالمی ریکارڈ بنایا۔ عامر سے پہلے اس نمبر پر کسی بھی کھلاڑی نے ففٹی اسکور نہیں کی تھی۔ شعیب اختر نے 2003ء ورلڈ کپ میں انگلینڈ کے خلاف 43 رنز بنائے تھے۔ انگلینڈ نے پاکستان کے خلاف لگاتار نویں باہمی سیریز میں ناقابل شکست رہنے کا اعزاز حاصل کر لیا جس میں سے آٹھ میں فتح بٹوری جبکہ ایک برابر رہی۔ پاکستان نے انگلینڈ کے خلاف واحد سیریز 1974ء میں جیتی تھی۔

TOPPOPULARRECENT