Thursday , September 20 2018
Home / شہر کی خبریں / اوقافی جائیدادوں کے تحفظ و اراضیات کی بازیابی میں محکمہ مال کا اہم رول

اوقافی جائیدادوں کے تحفظ و اراضیات کی بازیابی میں محکمہ مال کا اہم رول

حیدرآباد۔/4جون، ( سیاست نیوز) اسپیشل آفیسر وقف بورڈ جناب شیخ محمد اقبال (آئی پی ایس ) نے آج ڈپٹی چیف منسٹر جناب محمد محمود علی سے ملاقات کی اور تلنگانہ ریاست کے پہلے مسلم ڈپٹی چیف منسٹر کے اعزاز پر مبارکباد پیش کی۔ جناب محمود علی کے پاس محکمہ مال کا قلمدان ہے جو حکومت میں انتہائی اہمیت کا حامل ہے۔ اسپیشل آفیسر وقف بورڈ نے تلنگانہ میں ا

حیدرآباد۔/4جون، ( سیاست نیوز) اسپیشل آفیسر وقف بورڈ جناب شیخ محمد اقبال (آئی پی ایس ) نے آج ڈپٹی چیف منسٹر جناب محمد محمود علی سے ملاقات کی اور تلنگانہ ریاست کے پہلے مسلم ڈپٹی چیف منسٹر کے اعزاز پر مبارکباد پیش کی۔ جناب محمود علی کے پاس محکمہ مال کا قلمدان ہے جو حکومت میں انتہائی اہمیت کا حامل ہے۔ اسپیشل آفیسر وقف بورڈ نے تلنگانہ میں اوقافی جائیدادوں کے تحفظ کیلئے محکمہ مال کے رول کی اہمیت کو اُجاگر کرتے ہوئے ڈپٹی چیف منسٹر کو ایک تفصیلی رپورٹ پیش کی جس میں حکومت کے تعاون سے اوقافی جائیدادوں کے تحفظ کو یقینی بنانے کیلئے امکانی اقدامات کی تجویز پیش کی گئی۔ انہوں نے واضح کیا کہ اوقافی جائیدادوں کے تحفظ اور اراضیات کی بازیابی میں محکمہ مال کا اہم رول ہے اور ڈپٹی چیف منسٹر کی حیثیت سے جناب محمود علی 10اضلاع کے ضلع انتظامیہ کو اس سلسلہ میں پابند کرسکتے ہیں۔

انہوں نے سابق میں جاری کردہ سرکاری احکامات کا حوالہ دیا جس میں اوقافی جائیدادوں کے تحفظ کیلئے ضلع کلکٹر کی صدارت میں ہر ضلع میں ٹاسک فورس کی تشکیل عمل میں لائی گئی تھی۔ ٹاسک فورس کے ارکان میں ضلع سپرنٹنڈنٹس پولیس کے علاوہ ریونیو اور دیگر محکمہ جات کے اعلیٰ عہدیدار شامل ہیں۔ احکامات کے مطابق ہر ماہ میں ایک مرتبہ ٹاسک فورس کا اجلاس منعقد کرتے ہوئے اوقافی جائیدادوں کا جائزہ لینا ضروری ہے لیکن افسوس کہ ضلع حکام اس جانب توجہ دینے سے قاصر ہیں۔ اسپیشل آفیسر نے جناب محمود علی کو تجویز پیش کی کہ وہ ضلع کلکٹرس کو اس سلسلہ میں پابند کریں کہ وہ ٹاسک فورس کو متحرک کرتے ہوئے اوقافی اراضیات کے تحفظ کو یقینی بنائیں۔ انہوں نے کہا کہ اضلاع میں گذشتہ کئی برسوں سے ہزاروں تنازعات محکمہ مال میں زیر التواء ہیں جن کی عدم یکسوئی کے باعث اوقافی جائیدادیں وقف بورڈ کی تحویل سے باہر ہیں۔ انہوں نے محکمہ مال اور بالخصوص آر ڈی اوز کے پاس موجود تنازعات کی عاجلانہ یکسوئی کو یقینی بنانے کی درخواست کی۔ انہوں نے کہا کہ حکومت کو چاہیئے کہ وہ وقف بورڈ کے خلاف عدالتوں میں دائر محکمہ مال کے تمام مقدمات سے دستبرداری اختیار کرلے تاکہ اوقافی اراضی وقف بورڈ کو واپس ہوسکے۔ انہوں نے تجویز پیش کی کہ حکومت صنعتی اداروں کے قیام اور دیگر سرگرمیوں کے سلسلہ میں اوقافی اراضیات حاصل نہ کرے اور ناگزیر صورتحال میں اراضی کے حصول کے ساتھ ہی اس کا معاوضہ وقف بورڈ کو ادا کردیا جائے۔

جناب شیخ محمد اقبال نے مختلف مقدمات کا حوالہ دیتے ہوئے بتایا کہ محکمہ مال کے عدم تعاون کے سبب وقف بورڈ کو کئی اراضیات کے حصول میں دشواریوں کا سامنا ہے۔ انہوں نے ڈپٹی چیف منسٹر سے خواہش کی کہ وہ بحیثیت وزیر مال ضلع کلکٹرس اور دیگر ماتحت عہدیداروں کو رہنمایانہ خطوط جاری کرتے ہوئے اوقافی اراضیات کے تحفظ کے اقدامات کریں۔ انہوں نے چیف منسٹر اور ڈپٹی چیف منسٹر کی جانب سے اوقافی جائیدادوں کے تحفظ کے سلسلہ میں سنجیدگی کی ستائش کی اور کہا کہ اوقافی جائیدادوں کو اقلیتوں کی پسماندگی کے خاتمہ کیلئے استعمال کیا جانا چاہیئے۔ انہوں نے کہا کہ اوقافی جائیدادوں کی ترقی کے ذریعہ تعلیمی اور معاشی پسماندگی دور کی جاسکتی ہے۔ شیخ محمد اقبال نے تجویز پیش کی کہ حکومت اوقافی جائیدادوں کی ترقی کے سلسلہ میں سرمایہ کاری کرے اور پراجکٹ کی تکمیل کے بعد منافع کے ساتھ وہ اپنی رقم واپس حاصل کرسکتی ہے۔ جناب محمود علی نے یقین دلایا کہ وہ ان تجاویز کا سنجیدگی سے جائزہ لیں گے اور ضلع نظم و نسق کو ضروری ہدایات جاری کی جائیں گی۔ ڈپٹی چیف منسٹر نے حکومت کے اس موقف کا اعادہ کیا کہ اوقافی جائیدادوں کا بہرحال تحفظ کیا جائے گا اور ناجائز قابضین کے خلاف سخت کارروائی کی جائے گی۔

TOPPOPULARRECENT