Wednesday , January 17 2018
Home / اضلاع کی خبریں / اوقافی جائیدادوں کے تحفظ کیلئے موثر اقدامات

اوقافی جائیدادوں کے تحفظ کیلئے موثر اقدامات

بیدر /17 نومبر ( سیاست ڈسٹرکٹ نیوز ) ریاستی وزیر بلدی نظم و نسق اقلیتی بہبود اور اوقاف ڈاکٹر قمرالاسلام نے ڈپٹی کمشنر آفس میٹنگ ہال میں اپنے محکمہ جات کے عہدیداروں کے اجلاس میں کارکردگی کا جائزہ لے رہے تھے ۔ تقریباً 3 گھنٹے چلی اس میٹنگ میں ضلع بیدر کے تمام بلدی اداروں کے کمشنرس چیف آفیسرس اور دوسرے عہدیدار شریک رہے ۔ جائیداد ٹیکس صرف

بیدر /17 نومبر ( سیاست ڈسٹرکٹ نیوز ) ریاستی وزیر بلدی نظم و نسق اقلیتی بہبود اور اوقاف ڈاکٹر قمرالاسلام نے ڈپٹی کمشنر آفس میٹنگ ہال میں اپنے محکمہ جات کے عہدیداروں کے اجلاس میں کارکردگی کا جائزہ لے رہے تھے ۔ تقریباً 3 گھنٹے چلی اس میٹنگ میں ضلع بیدر کے تمام بلدی اداروں کے کمشنرس چیف آفیسرس اور دوسرے عہدیدار شریک رہے ۔ جائیداد ٹیکس صرف 3 فیصد وصول ہوا ہے ۔ تمام بلدی عہدیداروں کو ہدایت دئے گئے ہیں کہ 60 دن کے اندر محصول ( ٹیکس ) وصول کرنے کیلئے نوٹس جاری کریں ۔ علاوہ ازیں بیدر شہر میں غیر قانونی نل کنکشن کو ریگولرائز کرکے سربراہی آب نظام واٹر سپلائی بورڈ کے حوالے کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے ۔ میٹنگ کے بعد اخبار نویسوں سے بات چیت کرتے ہوئے ڈاکٹر قمرالاسلام نے بتایا کہ بلدی اداروں میں عہدیداروں کی کمی کے سبب کاموں کو انجام دینے میں دشواری پیش آرہی ہے ۔ گذشتہ 28 سال سے تقررات نہیں ہوئے تھے ۔ 2420 عہدیداروں کے تقررات کرنے کے پی ایس سی کو ہدایت دی گئی ہے ۔ قمر اسلام نے بتایا کہ شہر میں 24×7 سربراہی آب اسکیم کا ڈسمبر ختم تک افتتاح کیا جائے گا ۔ اسکیم کے 50 فیصد کام مکمل ہوئے ہیں ۔ یہ افتتاح چیف منسٹر کرناٹک مسٹر سدرامیا کریں گے ۔ وقف جائیدادوں کے سروے کے تعلق سے وزیر موصوف نے بتایا کہ محکمہ مال کے عہدیدار تحصیلداروں ، اسسٹنٹ کمشنرس ، ڈپٹی کمشنرس اوقافی جائیدادوں کا سروے کر رہے ہیں اور محکمہ اوقاف کے عہدیدار وقف جائیدادوں کی شناخت کر رہے ہیں ۔ ضلع بیدر میں 444 مساجد درج رجسٹر اوقاف ہیں ۔ ریاستی کانگریس حکومت نے مساجد کے پیش امام اور موذنین کو ماہانہ ہدیہ دینے کا فیصلہ کیا ہے ۔ اب تک 888 درخواستیں موصول ہوئی ہیں ۔ 468 درخواستوں کو گذشتہ دو تین ماہ قبل ہی منظوری دی گئی ہے جبکہ 93 درخواستیں پنڈنگ ہیں ۔ ماباقی درخواستوں کی مارچ 2015 سے قبل یکسوئی کی جائے گی ۔ وزیر اوقاف نے بتایا کہ محکمہ اوقاف میں 177 بی سی اور ڈی کیمپگری کے ملازمین کے تقررات کی سرگرمیاں ڈسمبر ختم تکم مکمل ہوں گی ۔ ایک سوال پر کہ بیدر تعلقہ کے چٹنلی گاؤں میں ایک ہزار ایکر اراضی جس پر قریب لوگ کاشت کرکے زندگی گذار رہے تھے اس کو اوقافی جائیداد قرار دیا گیا ہے ۔ جس کے خلاف بی جے پی یووا مورچہ نے احتجاج بھی کیا ہے ؟ جواب دیتے ہوئے قمر اسلام نے بتایا کہ وقف جائیداد ہے تو وہ وقف جائیداد رہے گی ۔ اس کیلئے لوک سبھا میں قانون بنایا گیا ہے ۔ ملک بھر میں وقف جائیدادوں کو سروے کیا جارہا ہے ۔ انہوں نے بتایا کہ اوقافی جائیدادوں پر قبضہ جات کو برخواست کرنے کیلئے سخت اقدامات کئے جائیں گے ۔ قمراسلام نے بتایا کہ اقلیتوں کا مطلب صرف مسلمان انہیں بلکہ اس کے کرچسن طبقے کو بھی زیادہ فائدہ ہو رہا ہے ۔ الحاج قمرالاسلام کے علاوہ پریس میٹنگ میں ڈپٹی کمشنر بیدر ڈاکٹر پی سی جعفر اور دوسرے عہدیدار موجود تھے ۔

TOPPOPULARRECENT