Monday , December 11 2017
Home / ہندوستان / او بی سی بل کی عدم منظوری، اپوزیشن پر تنقید

او بی سی بل کی عدم منظوری، اپوزیشن پر تنقید

بی جے پی کے او بی سی ارکان پارلیمنٹ سے وزیراعظم کی بات چیت
نئی دہلی ۔ 12 اپریل (سیاست ڈاٹ کام) وزیراعظم نریندر مودی نے دیگر پسماندہ طبقات(او بی سی) کمیشن کو دستوری موقف دلانے سے متعلق ایک بل کو راجیہ سبھا میں منظوری کو روکنے پرا پوزیشن جماعتوں کی سخت مذمت کی اور سوال کیا کہ انہوں (اپوزیشن) نے اس بل کی منظوری کو کیوں روک دیا جبکہ یہ بل پسماندہ طبقات کے فائدہ کے مقصد پر مبنی تھا۔ وزیراعظم مودی بی جے پی کے او بی سی ارکان پارلیمنٹ سے خطاب کررہے تھے جو لوک سبھا میں اس بل کی منظوری پر ان کا شکریہ ادا کرنے کیلئے پہنچے تھے۔ یہ بل سماجی اور تعلیمی اعتبار سے پسماندہ طبقات کیلئے قانونی و دستوری اختیارات کے حامل قومی کمیشن کے قیام کیلئے پیش کیا گیا تھا۔ بی جے پی کے جنرل سکریٹری بھوپیندر یادو نے اجلاسکے بعد کہا کہ ’’وزیراعظم نے کہا کہ یہ بل سماج کے پسماندہ طبقات کیلئے انصاف کو یقینی بنائے گی اور انہیں سماجی طور پر بااختیار بنانے میں مدد کرے گی لیکن یہ بات قابل حیرت ہیکہ یہ بل ایوان بالا میں کیوں منظور نہیں کی گئی‘‘۔ وزیراعظم نے کہا کہ ’’کیا ہی بہتر ہوتا اگر یہ بل ایوان بالا میں بھی منظور کرلیا جاتا‘‘۔ اس بل کی منظوری کی صورت  میں پارلیمنٹ کی منظوری کے بغیر ریاستیں کسی بھی طبقہ کو پسماندہ طبقات کی فہرست میں شامل یا حذف نہیں کرسکیں گی۔

Top Stories

TOPPOPULARRECENT