Wednesday , December 13 2017
Home / شہر کی خبریں / او بی سی کوٹہ میں مسلمانوں کیلئے مختص کردہ تحفظات پر عمل آوری کا مطالبہ

او بی سی کوٹہ میں مسلمانوں کیلئے مختص کردہ تحفظات پر عمل آوری کا مطالبہ

آل انڈیا میناریٹی آرگنائزیشن اور ملازمین کا اجلاس ، شرکاء کا خطاب
حیدرآباد۔/29اکٹوبر، ( سیاست نیوز) آل انڈیا میناریٹیز آرگنائزیشن اور میوا تنظیموں نے آج مرکزی حکومت سے مطالبہ کیا کہ وہ او بی سی کوٹہ میں مسلمانوں کو 4.5 فیصد تحفظات پر عمل آوری کرے اور جسٹس رنگناتھ مشرا کمیٹی جو مسلم اقلیتوں کی ترقی کیلئے کل ہند سطح پر سفارشات کی ہے اسے قبول کرے اور کہا کہ مرکزی حکومت دراصل ان کے مطالبات کی یکسوئی پر کوئی دھیان نہیں دے رہی ہے جس پر عنقریب وزیر اعظم اور مرکزی وزراء سے نمائندگی کی جائے گی، دوسرے مرحلہ کے طور پر تمام طبقات کو ساتھ لے کر کل ہند سطح پر دھرنے منظم کئے جائیں گے۔ ان مطالبات کی یکسوئی اور سرکاری ملازمین کو اصل صورتحال سے واقف کروانے کیلئے آج آل انڈیا میناریٹیز آرگنائزیشن اور میوا تنظیموں، آندھرا ، تلنگانہ کے علاوہ ملازمین نے تلنگانہ این جی اوز بھون میں کل ہند سطح کی کانفرنس منعقد کی۔ صدارت جناب سعید حسین چیرمین آل میوا نے کی۔ مہمان خصوصی کی حیثیت سے جناب عنایت علی باقری صدر نشین سٹ ون ، جناب فاروق حسین رکن قانون ساز کونسل نے شرکت کی۔ جناب محمد عبدالرشید نے خیرمقدم کیا۔ جناب عنایت علی باقری نے مرکزی ملازمین اور ریاست کے سرکاری ملازمین پر زور دیا کہ وہ اپنے آپ کو متحد رکھیں کیونکہ طاقت و قوت کے ذریعہ ہی مسائل کو حل کیا جاسکتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ مسلمان جو ان دنوں روزگار کے معاملہ میں پریشان ہیں انہیں پریشان ہونے کی ضرورت نہیں بلکہ وہ کڑی محنت اور عصری معلومات میں دلچسپی لیں۔

TOPPOPULARRECENT