Saturday , September 22 2018
Home / شہر کی خبریں / اُردو شعراء، ادیب، مصنفین اور صحافیوں کو اعزازات دینے کا تیقن

اُردو شعراء، ادیب، مصنفین اور صحافیوں کو اعزازات دینے کا تیقن

انجنی کمار گوئیل کے شعری مجموعہ کا رسم اجراء، ڈپٹی چیف منسٹر تلنگانہ محمد محمود علی اور دتاتریہ کا خطاب

انجنی کمار گوئیل کے شعری مجموعہ کا رسم اجراء، ڈپٹی چیف منسٹر تلنگانہ محمد محمود علی اور دتاتریہ کا خطاب
حیدرآباد۔12اپریل(سیاست نیوز) ڈپٹی چیف منسٹر تلنگانہ ریاست الحاج محمد محمو دعلی نے اُردو کو گنگا جمنی تہذیب کی سفیر زبان قراردیتے ہوئے کہاکہ قطب شاہی اور آصف جاہی دور حکمرانی میں اُردو کوریاست کی سرکاری زبان کا درجہ حاصل تھا اور مسلمانوں کے علاوہ دیگر ابنائے وطن کا بھی ذریعہ تعلیم اُردو ہی تھا مگر متحدہ ریاست آندھرا پردیش کے آندھرائی حکمرانوں نے اُردو سے تعصب کرتے اُردو زبان کو ایک قوم کی حد تک محدود کردیا گیا ہے۔آج یہاں رویندر بھارتی میں ممتاز شاعر انجنی کمار گوئل کے چوتھے شعری مجموعہ کہکشانِ گوئل کی رسم اجرائی کے موقع پر انہوں نے کہاکہ آزادی کے بعد تلنگانہ ہی ایسا علاقہ رہا جہاں پر اُردو زبان کی صحیح معنی میں پرورش اور نگہداشت کے کام میں مسلمانوں کے ساتھ دیگر ابنائے وطن نے بھی مکمل حصہ داری نبھائی۔ انہوں نے انجنی کمار گوئل کو مبارکباد پیش کرتے ہوئے کہاکہ انجنی کمار گوئل جیسے شاعر وں کا ہی اُردو کے سچے عاشقوں میں شمار کیا جاتا ہے جن کی مادری زبان تو ہندی ہے مگر وہ اُردو میں اپنا شعری مجموعہ شائع کرتے ہیں۔ انہوں نے اُردو شعراء ادیبوں‘مصنفین او رصحافیوں کو حکومت تلنگانہ کی جانب سے مراعات اور اعزازت فراہم کرنے کا بھی اس موقع پرتیقن دیا۔ مرکزی وزیر مسٹر بنڈارو دتاتریہ نے تقریب سے خطاب کرتے ہوئے انجنی کمار گوئل کو مبارکباد پیش کی ۔ انہو ںنے کہاکہ انجنی کمار گوئل کے شعری مجموعوں کی رسم اجرائی کے موقع پر وہ ہمیشہ موجود رہتے ہیں۔ ڈاکٹر فاروق شکیل‘پروفیسر فاطمہ پروین‘ڈاکٹر شیام سندر اگروال‘بزرگ شاعر جناب یوسف روش‘ ڈاکٹر آنند راج ورما‘ اصغر ویلاروی‘ منوہر لال استھانہ سحر کے علاوہ شعبہ اُردو ادب کے سینکڑوں شیدائیوں نے بھی اس تقریب میں شرکت کی۔ تقریب کی کاروائی اطیب اعجاز نے چلائی۔ بعدازاں گلوکار خان اطہرنے غزلیات بھی پیش کئے۔

TOPPOPULARRECENT