Saturday , October 20 2018
Home / Top Stories / آئی ایس آئی ایس کو ہندوستانی نوجوانوں کی قابل نظرانداز حمایت

آئی ایس آئی ایس کو ہندوستانی نوجوانوں کی قابل نظرانداز حمایت

اقلیتی طبقہ کے کسی بھی بے قصور شخص کو حراست میں نہیں لیا جائے گا آئی ایس آئی ایس پر ہندوستان میں امتناع عائد لوک سبھا میں وزیرداخلہ راج ناتھ سنگھ کا بیان

اقلیتی طبقہ کے کسی بھی بے قصور شخص کو حراست میں نہیں لیا جائے گا
آئی ایس آئی ایس پر ہندوستان میں امتناع عائد
لوک سبھا میں وزیرداخلہ راج ناتھ سنگھ کا بیان
نئی دہلی 16 ڈسمبر (سیاست ڈاٹ کام) وزیرداخلہ راج ناتھ سنگھ نے آج کہاکہ آئی ایس آئی ایس کو ہندوستانی نوجوانوں کی بالکل معمولی اور قابل نظرانداز تائید حاصل ہے۔ مسٹر راج ناتھ سنگھ نے اقلیتی طبقات (مسلمانوں) کے خاندانوں کو اس کا کریڈٹ دیتے ہوئے ستائش کی اور کہاکہ اقلیتی خاندانوں نے دہشت گرد گروپوں سے متاثر ہونے کے معاملہ میں اپنے بچوں کی حوصلہ شکنی کرتے ہوئے اُنھیں روک دیا۔ مسٹر راج ناتھ سنگھ نے لوک سبھا کو یہ یقین بھی دلایا کہ دہشت گردی کی مشتبہ سرگرمیوں کے ضمن میں اقلیتی طبقات کے کسی بھی بے قصور شخص کو حراست میں نہیں لیا جائے گا اور اگر ایسے (بے قصور افراد کو ہراسانی و حراست کے) کوئی پیش آئے ہیں تو انھیں ان (وزیرداخلہ) علم میں لایا جائے۔ مسٹر راج ناتھ سنگھ نے لوک سبھا میں وقفہ سوالات کے دوران واضح الفاظ میں کہاکہ ’’ہمارے ملک کے اقلیتی طبقات اس (دہشت گرد سرگرمیوں) کی حوصلہ شکنی کررہے ہیں۔ والدین اپنے بچوں کو انتہا پسند سرگرمیوں سے مرعوب اور متاثر ہونے سے روک رہے ہیں اور انتہا پسندی کی سرگرمیوں سے متاثر ہونے سے حوصلہ شکنی کررہے ہیں اور میں اس (اقلیتی نوجوان کے والدین کے جذبہ) کی ستائش کرتا ہوں‘‘۔

مسٹر راج ناتھ سنگھ کے اس بیان کے دوران مختلف جماعتوں کے ارکان میز تھپتھپاتے ہوئے خیرمقدم کررہے تھے۔ مزید برآں وزیرداخلہ نے یہ بھی کہاکہ کئی دوسرے ممالک میں اقلیتوں کی جانب سے آئی ایس آئی ایس کی تائید و حوصلہ افزائی کی جارہی ہے۔ آئی ایس آئی ایس سے ہندوستان کو لاحق خطرات اور اس ضمن میں حکومت کی طرف سے کئے جانے والے اقدامات کے بارے میں مسٹر راج ناتھ سنگھ مختلف سوالات کا جواب دے رہے تھے۔ اُنھوں نے کہاکہ یہ حقیقت ہے کہ ہمارے چند نوجوانوں نے آئی ایس آئی ایس کی پیروی و حمایت کی لیکن یہ قابل نظرانداز ہے۔ آئی ایس آئی ایس کی سرگرمیاں جیسے ہی دنیا میں پھیلنے لگیں، ہماری حکومت نے اس کا فی الفور نوٹ لیا اور ہندوستان میں آئی ایس آئی ایس پر امتناع عائد ہے۔ وزیرداخلہ نے کہاکہ آئی ایس آئی ایس کی سرگرمیوں پر ہمیں بھی گہری تشویش ہے… ہم ان سرگرمیوں پر قابو پانے کیلئے تمام ضروری اقدامات کررہے ہیں۔ علاوہ ازیں حکومت نے ایوان کو یقین دلایا کہ موجودہ صورتحال پر فکر و تشویش کی کوئی ضرورت نہیں ہے۔ ہندوستان میں آئی ایس آئی ایس کے اثر و رسوخ اور سرگرمیوں کے بارے میں ایک سوال پر مملکتی وزیرداخلہ کرن ریجیجو نے جواب دیا کہ ’’یہ ایک بے انتہا حساس معاملہ ہے جس کی تفصیلات ایوان میں بیان نہیں کی جاسکتیں‘‘۔

Top Stories

TOPPOPULARRECENT