Sunday , July 22 2018
Home / اضلاع کی خبریں / آبپاشی پراجکٹس کے کاموں پر گورنر کا اظہار اطمینان

آبپاشی پراجکٹس کے کاموں پر گورنر کا اظہار اطمینان

پداپلی میں مختلف تعمیری کاموں کا مشاہدہ ‘ ریاستی وزیر ہریش راؤ کے تجربہ اور طریقہ کار کی ستائش

پداپلی ۔ 21؍ جنوری (سیاست ڈسٹرکٹ نیوز) کالیشورم پراجکٹ حکومت کے مقررہ مدت میں مکمل کیا جانا چاہئے اور جنگی خطوط پر کام کئے جائیں ۔ پراجکٹ کی تعمیر پوری ہونے پر ریاست تلنگانہ سرسبزو شاداب ہوگی ان خیالات کا اظہار کیا۔ ریاستی گورنر نرسمہن نے بروز ہفتہ پداپلی ضلع بندیلا بیاریج پمپ ہاوز کے تعمیراتی کاموں کا وزیر آبیاشی ہریش راؤ ‘ منتھنی رکن اسمبلی پی مدھو کے ساتھ گورنرنے معائنہ کیا اور روبہ عمل کاموں کے طریقہ کار کے بارے میں انجنیئرس سے معلومات حاصل کیں ۔ اس موقع پر انہوں نے کہاکہ کالیشورم پراجکٹ کے کاموں کو مقررہ مدت میں پورا کرنے کی کوشش کریں ۔ پراجکٹ پر کام کر رہے مزدوروں اور کنٹراکٹرس کو پوری سہولتیں فراہم کی جا رہی ہیں اور ساتھ ہی مزدروں کے بچوں کو تعلیمی سہولتیں فراہم کرنے کا مشورہ دیا۔ ریاستی وزیر ہریش راؤ نے پراجکٹ سے متعلق تعمیراتی کاموں کی تفصیلات سے گورنر کو واقف کروایا۔ اور بتایاکہ میڈی گڈی کے پراجکٹ کے کاموں کے ساتھ سال بھر یہاں پانی دستیاب ہوگا ۔ روزانہ 2 ٹی ایم سی پانی 90 دنوں کو 180 ٹی ایم سی لفٹ کے ذریعہ کسانوں کوآبپاشی کے لئے فراہم کئے جانے کی سہولت رہے گی ۔ بیاریج کے پاس موجود پچھلی جانب کا پانی پمپ کے ذریعہ 13 میٹر بلندی سے فراہم کیا جائیگا ۔ اسی طرح بیاریج کے ساتھ ہی پراجکٹوں کے پاس سب اسٹیشن کے کاموں کو بھی جنگی خطوط پر کیا جا رہا ہے ۔ نیدیلا پراجکٹ کا معائنہ کرنے کے بعد گورنر یہاں سے ہیلی کیاپٹر کے ذریعہ گولی واڑہ پمپ ہاوز ایلم پلی پراجکٹ کے کاموں کا مشاہدہ کیا ۔ بعدازاں دھرمارم منڈل پراجکٹ کے کاموں کی تنقیح کی ۔ اس موقع پر پداپلی ضلع کلکٹر دیواسینا اور دیگر عہدیدار موجود تھے ۔ واضح رہے کہ گوداوری کے پانی کولفٹ کے ذریعہ پراجکٹوں کو منتقل کیا جا کر استفادہ کئے جانے کے طریقہ کار کے کاموں کا ریاستی گورنر نے تفصیلی معائنہ کرنے کے بعد اظہار اطمینان کیا ۔ کچھ یونٹوں کا انتہائی قریب پہنچ کر مشاہدہ کیا اور کاموں کی ہو رہی تاخیر کی وجہ کیاہے دریافت کیا اور انہیں مشورہ دیاکہ رات دن کام کرتے ہوئے جون تک مکمل کرلیں ۔ انہوں نے پانی کی مقدار کس قدر ذخیرہ آب گنجائش لفٹ کرنے کے لئے کس قدر بجلی کی کھپت کتنے موٹرس اور ان کی طاقت گنجائش ‘ کتنے پائپ لائن کام کریں گے دریافت کرنے کے بعد 8 ویں پیاکیج تک پانی کے ذخیرہ اندوزی کی گنجائش وہاں سے دوبارہ منتقلی ایل ایم ڈی مڈماینرس تک کتنے ٹی ایم سی کتنے وقت میں منتقل کیا جائیگا اس تعلق سے تفصیلات حاصل کیںاور کہاں کیا دشواری ہے ؟ کیا اس کا جائزہ لیا گیا ہے ۔ اس سے متعلق سوال کرنے پر وزیر آبپاشی نے ان تمام سوالات ‘ شک و شبہات کو دور کرنے کے لئے تفصیل سے جواب دیا ۔ اس پر ہریش راؤ کے تجربہ اور باریک بینی سے کاموں کی تنقیح کئے جا رہے طریقہ کار کی تعریف کی ۔ اس دوران گورنر نے فضائی سروے بھی کیا ۔ رامڑگ منڈل لگنی پور میں خطاب کرتے ہوئے کہاکہ دو سال قبل کے سی آر دو گھنٹے کالیشورم پراجکٹ پاور پوائنٹ سے پریزنیٹیشن کرنے پر چندر شیکھر کو میں نے خواب دیکھنے والا چندر شیکھر خیال کیا تھا ۔ لیکن چندر شیکھرراؤ بدل چکے ہیںاور کہا کہ تاریخ میں کے سی آر کا نام درج ہوگا ۔ اور ریاست میں پانی کی قلت نہیں ہوگی ۔ جون تک پہلا مرحلہ پورا ہوگا اور ریاست میں پانی کی قلت نہیں ہوگی اور کسانوں کو آبپاشی اور عوام کو پینے کے پانی کی دشواری نہیں ہوگی ۔ ریاست تلنگانہ صنعتی اور زرعی شعبہ میں تیزی کے ساتھ ترقی کی طرف بڑھ رہا ہے ۔

TOPPOPULARRECENT