Tuesday , November 21 2017
Home / کھیل کی خبریں / آرتھر کو وسیم اور میانداد سے استفادہ کرنے کا مشورہ

آرتھر کو وسیم اور میانداد سے استفادہ کرنے کا مشورہ

لاہور ۔ 27 مئی (سیاست ڈاٹ کام ) پاکستانی کرکٹ ٹیم کے سابق کوچ اور سابق آسٹریلیائی بولر جیف لاسن نے پاکستان کے نئے کوچ مکی آرتھر کو مشورہ دیا ہے کہ وہ ٹیم کا کھیل بہتر بنانے کیلئے سابق عظیم کھلاڑیوں جاوید میانداد اور وسیم اکرم کے تجربے سے استفادہ کریں۔2007 ء اور 2008 ء میں پاکستانی ٹیم کی کوچنگ کرنے والے جیف لاسن نے انٹرویو میں آرتھر کو خبردار کیا کہ انہیں اپنے نقطہ نظر پر عمل کروانے سے قبل کام کرنے کے مقامی کلچر کو سمجھنا ہو گا اور جیسے جیسے وہ مقامی کلچر اور کھلاڑیوں سے بہتر کارکردگی لینے کا فن سیکھیں گے، اتنا ہی کامیاب رہیں گے۔لاسن نے کہا کہ غیر ملکی کوچ ہونے کی وجہ سے آرتھر کو یہ فائدہ ہو گا کہ انہیں سابق کھلاڑیوں اور میڈیا کی تنقید کی زیادہ فکر کرنے کی ضرورت نہیں ہو گی بلکہ اس کی بجائے انہیں سابق کھلاڑیوں کو اپنا ہمنوا بنانے کی ضروت ہو گی۔آسٹریلیا کیلئے 180 ٹسٹ وکٹیں لینے والے لاسن نے کہا کہ اگر آرتھر نے وسیم اکرم اور جاوید میانداد کے تجربے سے استفادہ نہ کیا تو یہ بیوقوفی ہو گی، ان کا تجربہ بہت کارآمد ثابت ہو گا اور انہیں اس کا استعمال کرنا چاہئے۔انہوں نے مزید کہا کہ کوچ کی حیثیت سے مقامی کلچر کو سمجھنا ہو گا، آرتھر ماضی میں آسٹریلیائی ٹیم کا کلچر سمجھنے میں ناکام رہے اور انہیں برطرف کردیا گیا۔ ٹیم کے انتخاب کے بارے میں سوال پر لاسن نے کہا کہ ٹیم کی سلیکشن میں ہمیشہ بیرونی دباؤ اور اثرورسوخ ہوتا ہے لیکن ان کی کامیابی کا انحصار اس بات پر ہو گا کہ وہ اس دباؤ کو کیسے جھیل پاتے ہیں۔

TOPPOPULARRECENT