Wednesday , December 13 2017
Home / Top Stories / آسام اور مغربی بنگال میں انتخابی مہم کا اختتام

آسام اور مغربی بنگال میں انتخابی مہم کا اختتام

Dolgaon: Congress workers at an election campaign rally addressed by Congress Vice-President Rahul Gandhi’s in Darrang District in Assam on Friday.PTI Photo(PTI4_8_2016_000190B)

گوہاٹی ؍ کولکاتا 9 اپریل (سیاست ڈاٹ کام) آسام میں زور و شور سے جاری انتخابی مہم آج شام اختتام پذیر ہوگئی جہاں پر کانگریس کو اقتدار سے بیدخل کرنے کے لئے بی جے پی ایڑی چوٹی کا زور لگارہی ہے۔ 126 اسمبلی حلقوں میں سے 61 حلقوں میں دوسرے اور آخری مرحلہ کے انتخابات 11 اپریل کو منعقد ہوں گے۔ مغربی بنگال کے 3 اضلاع مغربی مدناپور، بنکورہ اور براوانا پر محیط 31 اسمبلی حلقوں میں بھی انتخابی مہم آج شام اختتام کو پہنچی جہاں پر دوسرے مرحلہ کے انتخابات پیر کو منعقد ہوں گے۔ ان انتخابات میں کئی ایک اپوزیشن لیڈروں کی قسمت کا فیصلہ ہوگا۔ وزیراعظم نریندر مودی نے بی جے پی ۔ اے جی پی ۔ بی پی ایف اتحاد کی مہم کی قیادت کرتے ہوئے  آسام میں 14 انتخابی ریالیوں کو مخاطب کیا۔ سرحد پار سے مداخلت کاری انتخابی مہم کا اصل موضوع رہی جبکہ وسطی اور زیریں آسام کے کئی ایک اسمبلی حلقوں میں اقلیتوں کے ووٹ فیصلہ کن ثابت ہوں گے۔ بی جے پی نے یہ وعدہ کیا ہے کہ ہند ۔ بنگلہ دیش سرحد کو مکمل بند کرتے ہوئے مداخلت کاری کا مسئلہ حل کیا جائے گا جبکہ کانگریس کا یہ استدلال ہے کہ آسام میں کوئی بنگلہ دیشی نہیں ہے اور ترون گوگوئی زیرقیادت حکومت نیشنل رجسٹر آف سٹیزنس کے اعداد و شمار کی تجدید کیلئے رجوع ہوئی ہے تاکہ مشتبہ باشندوں کی نشاندہی کی جاسکے۔ بی جے پی نے رائے دہندوں سے اپیل کی ہے کہ ریاست میں تبدیلی اور ترقی کیلئے ووٹ دیں، جبکہ کانگریس نے 15 سالہ دور اقتدار میں اپنی کامیابیوں بشمول بحالی امن کو اُجاگر کیا ہے۔

مودی، ممتا کی تقاریر پر الیکشن کمیشن کی نظر
کولکاتا ، 9 اپریل (سیاست ڈاٹ کام) الیکشن کمیشن وزیراعظم نریندر مودی اور چیف منسٹر مغربی بنگال ممتا بنرجی کی اس ہفتے آسنسول میں منعقدہ انتخابی ریلیوں میں کی گئی تقاریر کا جائزہ لے رہا ہے کہ آیا ضابطہ اخلاق کی کوئی خلاف ورزی تو نہیں ہوئی ہے، اور ساتھ ہی کمیشن نے ترنمول امیدوار عبدالرزاق ملا کی اُن کے ریمارکس پر سرزنش کی ہے۔ چیف الکٹورل آفیسر، مغربی بنگال کے عہدہ دار نے کہا کہ اُن (مودی اور ممتا) کی انتخابی ریلیوں کی سی ڈیز دہلی میں الیکشن کمیشن آف انڈیا کو بھیج دی گئی ہیں۔ ہمارے میڈیا سرٹفکیشن اور مانیٹرنگ کمیٹی کے پاس اُن کی تقاریر کا
ویڈیو فوٹیج ہے۔ دو روز قبل انتخابی ریلی میں مودی نے الزام عائد کیا تھا کہ ٹی ایم سی کا مطلب ’’ٹیرر (دہشت)، موت اور کرپشن‘‘ ہے، جس پر پارٹی نے شکایت کی تھی۔

TOPPOPULARRECENT