Monday , February 26 2018
Home / ہندوستان / آسام میں سابق فوجی کو شہریت ثابت کرنے کی ہدایت

آسام میں سابق فوجی کو شہریت ثابت کرنے کی ہدایت

جائز دستاویزات کے بغیر بنگلہ دیش سے ملک میں داخلہ کا الزام
گوہاٹی 7 نومبر (سیاست ڈاٹ کام) ہندوستان کے ایک ریٹائرڈ فوجی کو اپنی شہریت ثابت کرنے کے لئے نوٹس جاری کی گئی ہے۔ اس سے ایک ماہ قبل آسام میں بیرونی شہریوں کا پتہ چلانے سے متعلق ایک ٹریبونل نے فوج کے ایک ریٹائرڈ جونیر کمیشنڈ آفیسر کو بھی ایک ایسی ہی نوٹس جاری کی تھی۔ ماہر الدین احمد بحیثیت حوالدار 2004 ء میں ہندوستانی فوج سے ریٹائرڈ ہوئے تھے۔ بیرونی شہریوں سے متعلق ایک ٹریبونل نے ضلع بارپیٹا میں اُنھیں اور ان کی بیوی کے نام نوٹس جاری کرتے ہوئے اپنی ہندوستانی شہریت ثابت کرنے کی ہدایت کی ہے۔ نوٹسوں میں دعویٰ کیا گیا ہے کہ یہ دونوں کسی جائز دستاویزات کے بغیر 25 مارچ 1971 ء کے بعد بنگلہ دیش سے ہندوستان میں داخل ہوئے تھے۔ ماہرالدین نے اخباری نمائندوں سے کہاکہ ٹریبونل نے گزشتہ روز اُنھیں اپنی شہریت کے ثبوت کے ساتھ حاضر ہونے کی ہدایت کی ہے۔ ماہرالدین احمد نے کہاکہ ’’میں 1964 ء میں بارپیٹا میں پیدا ہوا۔ اگر میں ہندوستانی شہری نہ ہوتا تو فوج میں کیسے شامل ہوسکتا تھا‘‘۔ گزشتہ ماہ بھی ایسا ہی ایک واقعہ پیش آیا جس میں فوج میں جے سی او کی حیثیت سے خدمات انجام دینے کے بعد ریٹائرڈ ہونے والے محمد ازمال حق کو بھی ہندوستانی شہریت ثابت اور بتانے کی ہدایت کی گئی تھی کہ وہ ’غیر قانونی بنگلہ دیشی ایمگرنٹ نہیں۔ بیرونی شہریوں سے متعلق اس ٹریبونل نے ان پر بھی کسی جائز دستاویز کے بغیر بنگلہ دیش سے اس ملک میں داخل ہونے کا الزام عائد کیا تھا۔تاہم آسام پولیس نے ان واقعات پر معذرت خواہی کا اظہار کیا اور کہاکہ شناخت کی غلطی کے سبب یہ واقعہ پیش آیا۔

TOPPOPULARRECENT