Wednesday , November 22 2017
Home / اضلاع کی خبریں / آشا ورکرس کی ہڑتال 100 ویں دن میں داخل

آشا ورکرس کی ہڑتال 100 ویں دن میں داخل

خانہ پور 11 ڈسمبر (سیاست ڈسٹرکٹ نیوز) خانہ پور میں آشا ورکرس کی غیر معینہ مدت کی ہڑتال 100 ویں دن میں داخل ہوچکی ہے۔ آشا ورکروں نے آج اپنے مطالبات کو لے کر آج سڑکوں پر انوکھا احتجاج منظم کیا اور مخالف تلنگانہ حکومت نعرے بلند کئے۔ تفصیلات کے بموجب خانہ پور میں دفتر تحصیل کے روبرو جاری آشا ورکرس کے سلسلہ اور ہڑتال 100 ویں دن میں داخل ہوچکی آج آشا ورکرس نے اپنے مطالبات کی یکسوئی تک احتجاج جاری رکھنے کا عزم کیا اور اپنے احتجاج میں شدت پیدا کرنے کی دھمکی دی۔ آشا ورکرس نے حکومت کی سرد مہری پر سخت افسوس کا اظہار کیا اور کہاکہ ٹی آر ایس سربراہ چندرشیکھر راؤ چیف منسٹر تلنگانہ نے انتخابات سے قبل کنٹراکٹ ملازمین کو باقاعدہ و باضابطہ کرنے اور ان کی فلاح و بہبود اور ترقی کے بلند بانگ وعدہ کرتے ہوئے اقتدار حاصل کیا۔ حصول اقتدار کے بعد کے سی آر نے اپنے وعدوں کو ی کسر نظرانداز کردیا۔ آشا ورکرس نے کہاکہ حکومت جب تک ہمارے مطالبات وسائل حل نہیں کرے گی وہ اپنی ہڑتال جاری رکھیں گے۔ احتجاجی ورکرس نے حکومت سے مطالبہ کیاکہ انھیں ہر ماہ 15 ہزار روپئے تنخواہ دی جائے اور ان کی ملازمتوں کو مستقل طور پر سرکاری شعبہ میں شامل کرے۔ خانہ پور میں آشا ورکرس کی سلسلہ وار ہرتال کی سی آئی ٹی یو، سی پی آئی ایل نیو ڈیموکریسی، سی پی ایم، آل انڈیا کسان مزدور سبھا، کانگریس، تلگودیشم، وائی ایس آر سی پی و دیگر اپوزیشن جماعتوں کی تائید حاصل ہے جو ہر روز احتجاجی ورکرس کے کیمپ پہنچ کر احتجاجیوں سے اظہار یگانگت کررہے ہیں۔

TOPPOPULARRECENT