Friday , September 21 2018
Home / شہر کی خبریں / آفات سے محفوظ رہنے کیلئے جامع منصوبہ بندی اور تیاری، وقت کا اہم تقاضہ

آفات سے محفوظ رہنے کیلئے جامع منصوبہ بندی اور تیاری، وقت کا اہم تقاضہ

اردو یونیورسٹی میں نظم و نسق عامہ کے قومی سمینار سے ڈاکٹر موہن کندا و دیگر کا خطاب
حیدرآباد، 21؍ مارچ (پریس نوٹ) آفات سے محفوظ رہنے کے لیے حکومت اور معاشرے دونوں کی جانب سے جامع منصوبہ بندی اور تیاری وقت کا اہم اور اولین تقاضہ ہے قدرتی آفات اور تباہی کے واقعات کی صورت میں احتیاط اور تدارک کے اقدامات سے متعلق عوام میں عام بیداری بھی ایک اہم ضرورت ہے۔ ان خیالات کا اظہار پروفیسر وی ایس پرساد، سابق وائس چانسلر، ڈاکٹر بی آر امبیڈ کر اوپن یونیورسٹی وسابق ڈائرکٹر NAACنے آج شعبۂ نظم ونسق عامہ، مولانا آزاد نیشنل اُردو یونیورسٹی میں منعقد دوروزہ قومی سمینار بعنوان ’’ہندوستان میں آفات کا انتظامیہـ‘‘ نے اپنے صدارتی خطاب میں کیا۔ انہوں نے مزید کہا کہ قدرتی آفات سے کبھی بھی معمولی اطلاع و جانکاری بھی کسی ناخوشگوار واقعہ کے برے نتائج کو ختم کرنے اور کم کرنے کا سبب بنتی ہے۔ عصر حاضر میں ڈیزاسٹر مینجمنٹ کی اہمیت میں بہت زیادہ اضافہ ہوا ہے۔ حکومت ہند بھی آفات کے انتظامیہ سے متعلق اہم اقدامات کو روبعمل لارہی ہے ۔مہمان اعزازی ڈاکٹر ایم اے سکندر، رجسٹرار نے اپنے خطاب میں کہا کہ عالمیانہ کے اس دور میں آفات سماوی کا انتظامیہ ایک اہم مسئلہ بن گیا ہے جس پر دنیا کے تقریباََ ممالک سنجیدہ ہیں اس سلسلہ میں عالمی سطح پر تحقیق کا کام اعلی پیمانہ پر جاری ہے جس کے نتیجہ میں بین الاقوامی اور قومی سطح پر جامعات میں ڈپلوما اور ڈگری و پی جی کالج پر بطور کورس پڑھایا جارہا ہے۔ مانو کے شعبہ نظم ونسق عامہ میں بھی یہ کورسس شامل کیا گیا ہے ۔جس سے متعلق طلبہ کو آگہی فراہم کی جارہی ہے۔ڈاکٹر موہن کندا آئی اے ایس ،سابق چیف سکریٹری حکومت آندھراپردیش اور سابق رکن نیشنل ڈسزاسٹر مینجمنٹ اتھاریٹی نے کلیدی خطبے میں کہاکہ آفات سماوی ہندوستان کے ساتھ ساتھ دیگر ممالک میں بھی واقع پذیر ہوتی ہیں۔ ہندوستان میں عصری ٹکنالوجی سے استفادہ کرتے ہوئے آفات سماوی کے انتظامیہ کو منظم کرنے کی ضرورت ہے۔ابتداء پروفیسر ایس ایم رحمت اللہ، سمینار ڈائرکٹر و ڈین سٹلائیٹ کیمپس نے اپنے خطاب میں کہا کہ ترقی یافتہ ممالک میں آفات سماوی کے انتظامیہ پر خصوصی طورپر توجہ مرکوز کرتے ہوئے راحت اور بچاؤ کاری کے لیے تیاری کا کا م انجام دیا جارہا ہے ۔ ڈاکٹر کنیز زہرہ صدر شعبہ نظم ونسق عامہ مانو نے افتتاحی خطبہ پیش کیا اور افتتاحی سیشن کی نظامت کی۔اس سمینار میں ساونیئر کا رسم اجرأ مہمانوں کے ہاتھوں انجام دیا گیا ساتھ ہی ڈاکٹر عبدالقیوم اسوسیٹ پروفیسر کی تازہ تصنیف ہندوستان کا نظم ونسق کی رسم اجرا بھی انجام دی گئی۔ اس پروگرام کا اختتام ڈاکٹر سید نجی اللہ کے شکریہ پر عمل میں آیا۔

TOPPOPULARRECENT