Thursday , September 20 2018
Home / سیاسیات / اپوزیشن قائدین کیلئے 13 مارچ کو سونیا گاندھی کا ڈنر

اپوزیشن قائدین کیلئے 13 مارچ کو سونیا گاندھی کا ڈنر

بی جے پی کیخلاف مقابلہ کیلئے متحدہ فرنٹ تشکیل دینے کی مساعی، تلگودیشم کی شرکت متوقع
نئی دہلی 6 مارچ (سیاست ڈاٹ کام) کانگریس کی سینئر لیڈر سونیا گاندھی نے بی جے پی کے خلاف ایک متحدہ محاذ تشکیل دینے کی مساعی کے طور پر تمام اپوزیشن جماعتوں کے قائدین کو 13 مارچ کو ڈنر پر مدعو کی ہیں۔ کانگریس کے اعلیٰ ذرائع نے کہاکہ پارلیمنٹ میں حکومت کو نشانہ بنانے کے لئے اپوزیشن جماعتوں کے تعاون و اشتراک کے پس منظر میں یہ مساعی کی گئی ہے جو اپوزیشن کو مستحکم بنانے اور 2019 ء کے لوک سبھا انتخابات سے قبل ایک متحدہ فرنٹ کا سنگ بنیاد رکھنے کی سمت ایک اہم قدم سمجھی جارہی ہے۔ سونیا گاندھی اپوزیشن قائدین کو یہ دعوت ایک ایسے وقت دی ہیں جب ٹی آر ایس کے سربراہ اور تلنگانہ کے چیف منسٹر کے چندرشیکھر راؤ نے ایک غیر بی جے پی اور غیر کانگریسی محاذ بنانے کی تجویز پیش کی ہے۔ ذرائع نے توثیق کی کہ سونیا گاندھی کا یہ ڈنر تمام اپوزیشن جماعتوں کو ایک دوسرے کے قریب لانے، پارلیمنٹ کے اندر اور باہر بی جے پی کے خلاف مقابلہ کی اہمیت و ضرورت کو اُجاگر کرے گا۔ کانگریس کے ایک سینئر لیڈر نے کہاکہ ’’یہ محض ایک ڈنر ہی نہیں ہوگا بلکہ اُن اپوزیشن جماعتوں کی طاقت کا مظاہرہ ہوگا جو بی جے پی کی غلط حکمرانی کے خلاف فرنٹ کی تشکیل کے لئے آگے آنا اور متحدہ ہونا چاہتے ہیں‘‘۔ کانگریس کے اہم لیڈر نے کہاکہ کئی اہم قائدین شرکت کی توثیق کرچکے ہیں۔ سونیا گاندھی چاہتی ہیں کہ بشمول ٹی ایم سی سربراہ ممتا بنرجی تمام سرکردہ اپوزیشن قائدین اس ڈنر میں شرکت کریں۔ تاہم ممتا بنرجی نے جو پارلیمنٹ کے اندر اور باہر تعاون کے لئے ٹی آر ایس سربراہ کے چندرشیکھر راؤ اور ڈی ایم کے کے کارگذار صدر اسٹالن سے بات چیت کرچکی ، اس ڈنر میں شرکت کے ارادہ کی ہنوز توثیق نہیں کی۔ ایک سینئر اپوزیشن لیڈر نے اپنی شناخت مخفی رکھنے کی شرط پر کہاکہ این ڈی اے کی حلیف تلگودیشم پارٹی بھی کانگریس رہنما سونیا گاندھی کے اس ڈنر میں شرکت کرے گی۔

TOPPOPULARRECENT