Thursday , September 20 2018
Home / سیاسیات / اکھلیش کو وزارت اعلیٰ پر رہنے کا اخلاقی حق نہیں: کلیان سنگھ

اکھلیش کو وزارت اعلیٰ پر رہنے کا اخلاقی حق نہیں: کلیان سنگھ

نئی دہلی ۔ 19 ۔ مئی (سیاست ڈاٹ کام) سینئر بی جے پی لیڈر کلیان سنگھ نے آج وزیر اعلیٰ یو پی اکھلیش یادو سے کہا کہ حالیہ لوک سبھا انتخابات میں سماج وادی پارٹی کی ناقص کارکردگی کی اخلاقی ذمہ داری قبول کرتے ہوئے انہیں اپنے عہدہ سے مستعفی ہوجانا چاہئے ۔ آر ایس ایس ارکان سے ملاقات کے بعد اخباری نمائندوں سے بات کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ اگر سماج وادی پارٹی اخلاقی اقدار کی باتیں کرتی ہے تو یہ مناسب معلوم نہیں ہوتا حالانکہ عوام نے پارٹی کے خلاف اپنا فیصلہ دے دیا ہے لہذا اصولاً اکھلیش یادو کو اپنے عہدہ سے مستعفی ہوجانا چاہئے ۔ انہوں نے کہا کہ انتخابی نتائج کے بعد جب عوام کا فیصلہ سماج وادی پارٹی کے حق میں نہیں ہے تو ایسی حکومت کا ’’وجود‘‘ ہی نہیں ہے اور عوام نے اپنا تازہ ترین فیصلہ بی جے پی کے حق میں دیا ہے، لہذا بی جے پی کو ہی ریاست میں آئندہ حکومت تشکیل دینے کا آئینی حق ہے ۔ کلیان سنگھ نے الزام عائد کیا کہ سماج وادی پار ٹی نے قنوج اور فیروز بادا حلقہ انتخاب میں انتخابی دھاندلیاں کرتے ہوئے بوتھس پر قبضہ کرلیا جہاں سے بی جے پی نے دو پارلیمانی نشستوں پر قبضہ کیا جبکہ بی ایس پی اور آر ایل ڈی ایک بھی نشست پر کامیابی حاصل نہ کرسکتی۔ انہوں نے اس بات کی تردید کی کہ انہوں نے آر ایس ایس ارکان سے حکمت عملی کے موضوع پر کوئی بات کی ہے۔ انہوں نے اس بات کی بھی تردید کی کہ آر ایس ایس بی جے پی کا ریموٹ کنٹرول ہے۔

TOPPOPULARRECENT