Monday , October 22 2018
Home / شہر کی خبریں / اکھیلہ پریہ کے مودی کے خلاف ریمارکس پر کارروائی کا مطالبہ

اکھیلہ پریہ کے مودی کے خلاف ریمارکس پر کارروائی کا مطالبہ

صدر بی جے پی اے پی لکشمی نارائنا کی وفد کے ساتھ گورنر سے نمائندگی
حیدرآباد ۔ 7 ۔ جون : ( سیاست نیوز ) : آندھرا پردیش ریاستی بی جے پی قائدین کے ایک وفد نے مسٹر کے لکشمی نارائنا صدر بی جے پی آندھرا پردیش کی قیادت میں آج راج بھون پہونچکر گورنر آندھرا پردیش و تلنگانہ مسٹر ای ایس ایل نرسمہن سے ملاقات کی اور مختلف مسائل پر مشتمل تفصیلی یادداشت گورنر کو پیش کی ۔ وفد میں مسرس کاووری ، سندیپ رام بوٹلہ ، وشنو ، دنیش ریڈی و دیگر قائدین بی جے پی بھی شامل تھے ۔ بعد ازاں اخباری نمائندوں سے بات چیت کرتے ہوئے مسٹر کے لکشمی نارائنا صدر بی جے پی آندھرا پردیش نے بتایا کہ سرکاری تقاریب میں وزیراعظم مسٹر نریندر مودی کے خلاف من گھڑت الزامات عائد کئے جانے کی شکایت کی گئی ۔ علاوہ ازیں بالخصوص وزیر سیاحت اکھیلہ پریہ کی جانب سے وزیراعظم پر کئے ہوئے ریمارکس کے خلاف فی الفور کارروائی کرنے کی خواہش کی ۔ انہوں نے نائب صدر نشین ریاستی منصوبہ بندی کمیشن مسٹر کٹھمبا راؤ پر سخت تنقید کی اور من مانی غلط و بے بنیاد عائد کئے جانے والے الزامات پر برہمی کا اظہار کیا ۔ مسٹر لکشمی نارائنا نے مزید کہا کہ ریاستی حکومت کی کارکردگی بالکلیہ طور پر ٹھپ ہو کر رہ گئی ہے ۔ گورنر کو پیش کردہ یادداشت میں تروپتی میں واقع الپیری کے مقام پر صدر قومی بی جے پی مسٹر امیت شاہ کے ساتھ پیش آئے واقعہ کے خلاف بھی سخت کارروائی کرنے کے علاوہ پولیس عہدیدار حکومت کے اشاروں پر کام کرنے سے گریز کرنے کے لیے ضروری اقدامات کرنے کی پر زور خواہش کی گئی ۔۔

TOPPOPULARRECENT