Tuesday , September 18 2018
Home / دنیا / ایبولا وائرس سے نمٹنے ہندوستان کا خطیر عطیہ

ایبولا وائرس سے نمٹنے ہندوستان کا خطیر عطیہ

اقوام متحدہ۔ 10 ڈسمبر (سیاست ڈاٹ کام) ایبولا وائرس سے نمٹنے اور ان سے ہمیشہ کے لئے نجات پانے کے لئے جو عالمی کوششیں کی جارہی ہیں، ہندوستان نے آج یقین دہانی کروائی کہ وہ خود بھی عالمی سطح پر کی جانے والی مساعی میں تعاون کرے گا جس کے تحت ہندوستان، اقوام متحدہ کی ایک ایجنسی کے ساتھ معاہدہ پر دستخط بھی کئے ہیں جس کے مطابق ہندوستان سے 10 ملی

اقوام متحدہ۔ 10 ڈسمبر (سیاست ڈاٹ کام) ایبولا وائرس سے نمٹنے اور ان سے ہمیشہ کے لئے نجات پانے کے لئے جو عالمی کوششیں کی جارہی ہیں، ہندوستان نے آج یقین دہانی کروائی کہ وہ خود بھی عالمی سطح پر کی جانے والی مساعی میں تعاون کرے گا جس کے تحت ہندوستان، اقوام متحدہ کی ایک ایجنسی کے ساتھ معاہدہ پر دستخط بھی کئے ہیں جس کے مطابق ہندوستان سے 10 ملین ڈالرس کو ایک عالمی ٹرسٹ فنڈ اکاؤنٹ میں منتقل کیا جائے گا جس کی تشکیل ایبولا وائرس سے موثر طور پر نمٹنے اور اس سے نجات حاصل کرنے کے لئے عمل میں آئی ہے۔ اقوام متحدہ کے لئے ہندوستانی سفیر اشوک کمار مکرجی اور ایبولا ریسپانس ملٹی پارٹنر ٹرسٹ فنڈ (MPTF) کے ایگزیکٹیو کوآرڈینیٹر پانیک گلیماریک کے درمیان اسٹینڈرڈ ایڈمنسٹریٹیو ارینجمنٹ پر کل دستخط کئے گئے ہیں۔ اس موقع پر اقوام متحدہ میں انڈین مشن کی جانب سے جاری کئے گئے ایک بیان میں کہا گیا ہے کہ ایبولا وائرس سے نمٹنے اس وقت عالمی سطح پر جو کوششیں جاری ہیں۔ ان میں ہندوستان اپنا رول ادا کرنے کا پابند ہے۔ یہاں اس بات کا تذکرہ بھی ضروری ہے کہ ایبولا وائرس کے پھیلنے پر یو این سسٹم رسپانس کی لانچنگ ستمبر 2014ء میں سیکریٹری جنرل بان۔ کی۔ مون کے ہاتھوں عمل میں آئی تھی تاکہ اقوام متحدہ کے تمام رکن ممالک اس خطرناک وائرس سے لڑنے یکجا ہوجائیں اور ایک مشترکہ پلیٹ فارم سے وائرس کو ہمیشہ کیلئے کنٹرول کرسکیں۔

TOPPOPULARRECENT