Saturday , November 18 2017
Home / Top Stories / ایران میں انٹرنیٹ پر روزنامہ سیاست کی کافی مقبولیت

ایران میں انٹرنیٹ پر روزنامہ سیاست کی کافی مقبولیت

اردو قارئین کا پسندیدہ اخبار ، جناب زاہد علی خاں کو ایران دورہ کی دعوت ، ایرانی وفد کی ایڈیٹر سیاست سے ملاقات
حیدرآباد۔16 مارچ (سیاست نیوز) ایران کے ایک نمائندہ وفد نے جس کی قیادت آیت اللہ محمد حسن زمانی جنرل سکریٹری انٹرنیشنل رلیشنز آف دینی مدارس ایران کررہے تھے آج دفتر سیاست پہنچ کر جناب زاہد علی خان سے ملاقات کی۔ وفد میں حجۃ الاسلام علی خوشخو اور ہز ایکسلنسی علی راستگو کونسل آف ایران متعینہ حیدرآباد کے علاوہ آقا حیدر رضا ضابط موجود تھے۔ آیت اللہ محمد حسن زمانی کا ہیڈکوارٹر خم ہے جہاں سے دینی مدارس کی یہ تنظیم کام کرتی ہے۔ ان کا شمار ایران کے نامور اسکالرس میں ہوتا ہے۔ انہوں نے جناب زاہد علی خان کو اپنے ادارے کی سرگرمیوں سے واقف کروایا اور کہا کہ ایران میں واقع تمام دینی مدارس کو ادارے کے ذریعہ رہنمائی کی جاتی ہے۔ انہوں نے کہا کہ شیعہ اور اہل سنت کے دینی مدارس میں اس ادارے کی جانب سے نہ صرف کتابیں فراہم کی جاتی ہیں بلکہ ہر ممکنہ تعاون کیا جاتا ہے۔ دین کے فروغ کے لیے ملک کے مختلف حصوں میں علماء کو روانہ کرنا اس ادارے کی ذمہ داری ہے۔ انہوں نے بتایا کہ ہندوستان سے تعلق رکھنے والے دینی مدارس کے ذمہ داروں کو بھی ایران مدعو کیا جاتا ہے۔ انہوں نے بتایا کہ ایران میں روزنامہ سیاست انٹرنٹ پر کافی مقبول ہے۔ ایران میں اردو جاننے والے افراد انٹرنٹ پر روزنامہ سیاست کا مطالعہ کرتے ہیں۔ آیت اللہ حسن زمانی نے جناب زاہد علی خان کو اس بات کی پیشکش کی کہ ایران سے اسلامک لٹریچر حیدرآبادی اداروں کیلئے روانہ کیا جائے گا۔ انہوں نے دینی مدارس کے باہمی اشتراک کیلئے سیاست کے ساتھ کام کرنے دلچسپی کا اظہار کیا۔ جناب زاہد علی خان نے روزنامہ سیاست کی سرگرمیاں بطور خاص اسکالرشپ، خطاطی، لاوارث میتوں کی تدفین، غریبوں کو کپڑے کی فراہمی اور سیاست ملت فنڈ کے ذریعہ امدادی کاموں کی تفصیلات بیان کیں۔ ایرانی وفد نے سیاست کی ملی سرگرمیوں کی بھرپور ستائش کی اور کہا کہ سماج میں اس طرح کی سرگرمیوں کی اشد ضرورت ہے۔ سیاست غریب خاندانوں کی مدد کرتے ہوئے تعلیمی اور معاشی ترقی کا ضامن بن رہا ہے۔ آیت اللہ حسن زمانی نے خطاطی کے شعبہ میں باہمی اشتراک کا تیقن دیا۔ ایرانی وفد نے جناب زاہد علی خان کو دورۂ ایران کی دعوت دی جسے انہوں نے قبول کرلیا۔ ایران کے یہ اسکالرس ایک کانفرنس میں شرکت کے لیے حیدرآباد میں ہیں اور کل جمعہ کو واپسی ہوگی۔

TOPPOPULARRECENT