Sunday , November 19 2017
Home / دنیا / ایران پر تحدیدات ، ہندوستان کی قربانی

ایران پر تحدیدات ، ہندوستان کی قربانی

کانگریس اگر معاملت مسترد کرے تو مقصد فوت ہوجائے گا : وہائٹ ہاوز
واشنگٹن ۔ 8 اگسٹ ۔(سیاست ڈاٹ کام) امریکہ نے یہ بات تسلیم کی ہے کہ ایران کے خلاف تحدیدات پر عمل آوری کے سلسلہ میں ہندوستان کو کافی قربانیاں دینی پڑی اور کہا کہ اگر ایران کے ساتھ نیوکلیر معاملت کو کانگریس کی جانب سے بے اثر کردیا جائے تو پھر ہندوستان جیسے ممالک کو اس طرح کے مشکل حالات سے دوچار رہنے کی کوئی بنیاد نہیں رہے گی ۔ صدر امریکہ براک اوباما نے اس وقت کی سکریٹری آف اسٹیٹ ہلاری کلنٹن کو خاص طورپر ہندوستان روانہ کیا تھا تاکہ وہ ایران کے خلاف امریکی زیرقیادت بین الاقوامی تحدیدات میں ہندوستان کو شمولیت کیلئے رضامند کریں۔ اس کے بعد ہندوستان نے ضروری اقدامات کرتے ہوئے ایران سے تیل کی درآمد کم کرنے کے اقدامات کئے اور اس سے ہندوستان کی معیشت پر کافی اثر پڑا تھا ۔ یہ ایسی حقیقت ہے جسے وائیٹ ہاؤز نے تسلیم کیا ہے ۔وائیٹ ہاؤز کے پریس سکریٹری جوش ارنسٹ نے کہاکہ ہمیں وہ دن یاد ہیں جب تین تا چار سال قبل ایران کے خلاف تحدیدات عائد کی گئی تھیں اور امریکہ نے ساری دنیا بشمول ہندوستان کا سفر کیا ۔ حکومت ہند سے ہمارے نمائندے نے بات کی اور ایران سے درآمد کردہ تیل کی رقم ادا نہ کرنے کی خواہش کی ۔ انھوں نے کہا ان مذاکرات کے پس منظر میں ہم یہ تسلیم کرتے ہیں کہ ہندوستان کے عوام نے معاشی قربانی دی ۔ انھوں نے یہ بات بھی نوٹ کی کہ ہندوستانی قائدین نے تحدیدات کو روبہ عمل لانے سے اتفاق کیا اور یہ ایک ایسا قدم تھاجو ظاہر کرتا تھا کہ ایران کو ڈپلومیسی کے ذریعہ نیوکلیئر ہتھیار بنانے سے روکنے میں امریکی کوشش اگر کامیاب ہوتی ہے تو وہ ( ہندوستان ) مدد کیلئے تیار ہے۔

TOPPOPULARRECENT