Sunday , April 22 2018
Home / Top Stories / ایران کیخلاف جوابی کارروائی کرنے سعودی فوجی اتحاد کی دھمکی

ایران کیخلاف جوابی کارروائی کرنے سعودی فوجی اتحاد کی دھمکی

یمنی باغیوں کو میزائیلوں کی اسمگلنگ کا الزام، ریاض میں ایک شخص کی ہلاکت کی توثیق

ریاض 27 مارچ (سیاست ڈاٹ کام) سعودی عرب کے زیرقیادت فوجی اتحاد نے دیرینہ علاقائی حریف ایران کے خلاف کارروائی کی دھمکی دیتے ہوئے الزام عائد کیاکہ مملکت پر یمنی حوثی باغیوں کے متعدد بیلسٹک میزائیل حملوں کے پس پردہ تہران ملوث ہے۔ سعودی فورسیس نے اتوار کو سات میزائیل روک دینے کا دعویٰ کیا ہے جن میں دو میزائیل دارالحکومت ریاض پر داغے گئے تھے۔ یمن میں سعودی عرب کی زیرقیادت فوجی مداخلت کی تیسری سالگرہ کے موقع پر یمن کے حوثی باغیوں نے اس مملکت کو متعدد بیلیسٹک میزائیل حملوں کا نشانہ بنایا۔ فوجی اتحاد کے ذمہ داروں نے ایک پریس کانفرنس کے دوران میزائیل حملوں کا ملبہ دکھاتے ہوئے کہاکہ فارنسک تجزیہ سے ظاہر ہوتا ہے کہ حوثی باغیوں کو ان کے حلیف ملک ایران کی طرف سے یہ میزائیلس سربراہ کئے گئے تھے۔ فوجی اتحاد کے ترجمان ترکی المالکی نے اخباری نمائندوں سے کہاکہ ’’سعودی علاقہ کے خلاف حملوں کیلئے استعمال کردہ میزائیلس کی ایران سے اسمگلنگ کی گئی ہے۔ ترکی المالکی نے مزید کہاکہ ’’ہم ایران کے خلاف صحیح وقت اور صحیح مقام پر جواب دینے کا حق محفوظ رکھتے ہیں‘‘۔ سعودی دارالحکومت پر حوثیوں کے پہلے میزائیل حملے میں ایک شخص ہلاک ہوگیا تھا۔ تفصیلات کے مطابق مصری شہری 38 سالہ عبدالمطلب احمد جو ریاض کے ضلع اُم الحمام میں واقع اپنے کمرہ میں محو خواب تھا، اس حملے میں ہلاک ہوگیا۔ دیگر تین مصری مزدور زخمی ہوگئے جنھیں دواخانہ میں شریک کردیا گیا ہے۔ حوثیوں نے اپنے المصیرہ ٹیلی ویژن پر کہاکہ ریاض کا ملک خالد انٹرنیشنل ایرپورٹ بھی میزائیل حملے کے نشانہ پر تھا۔ ترکی المالکی نے الزام عائد کیاکہ حوثی باغی صنعا کے ایک ایرپورٹ کو سعودی علاقوں پر میزائیل حملوں کے لئے استعمال کررہے ہیں۔ حوثی باغیوں کو اسلحہ فراہم کرنے کے الزام کی ایران متعدد مرتبہ تردید کرچکا ہے۔

TOPPOPULARRECENT