Saturday , September 22 2018
Home / شہر کی خبریں / ایس ایس سی امتحانات ، سنٹرس پر بنیادی سہولتوں کی ضرورت

ایس ایس سی امتحانات ، سنٹرس پر بنیادی سہولتوں کی ضرورت

ماضی میں کئی سنٹرس میں عدم سہولتوں کی شکایتیں ، خصوصی بس خدمات

ماضی میں کئی سنٹرس میں عدم سہولتوں کی شکایتیں ، خصوصی بس خدمات

حیدرآباد ۔ 21 ۔ مارچ : ( سیاست نیوز ) : ریاست میں ہونے والے یس یس سی امتحانات کے دوران طلبہ کو امتحانی مراکز پر بنیادی سہولتوں کو یقینی بنائے جانے کی ضرورت ہے ۔ دونوں شہروں حیدرآباد و سکندرآباد میں جن طلبہ کے امتحانی مراکز سرکاری اسکولوں میں بنتے ہیں وہ بنیادی سہولتوں کی عدم موجودگی کی متعدد مرتبہ شکایات کرتے ہیں لیکن ان کی شکایات کی کوئی سنوائی نہیں ہوتی ۔ اسی لیے ضلع ایجوکیشنل آفیسر کو امتحانات کے آغاز سے قبل ہی تمام امتحانی مراکز کے ذمہ داروں کو اس بات کا پابند بنانا چاہئے کہ وہ امتحانی مراکز میں طلبہ کو بنیادی سہولتوں کی فراہمی کو یقینی بنانے کے اقدامات کریں ۔ حیدرآباد میں جملہ 386 امتحانی مراکز پر 27 مارچ سے یس یس سی امتحانات کا آغاز ہونے جارہا ہے ۔ محکمہ تعلیم کے عہدیداروں کا کہنا ہے کہ سرکاری اسکولوں میں بنیادی سہولتوں کی عدم موجودگی کے سبب عہدیدار کچھ بھی کرنے سے قاصر ہیں لیکن انہیں بھی اس بات کا احساس ہے کہ امتحانات کے دوران بنیادی سہولتوں کی فراہمی ناگزیر ہوتی ہے ۔ عہدیداروں کے بموجب امتحانی مرکز کے قیام کے بعد اگر امتحانات سے دو یوم قبل اعلیٰ عہدیداروں کی ٹیمیں مراکز کا معائنہ کریں اور ہدایات جاری کریں تو امتحانی مراکز کی حالت کو بہتر بنایا جاسکتا ہے لیکن ایسا میکانزم موجود نہیں ہے جس کی وجہ سے طلباء کو امتحانات کے دوران بھی دشواریوں کا سامنا کرنا پڑتا ہے ۔ پرانے شہر کے مختلف منڈلوں میں تقریبا 200 امتحانی مراکز قائم کئے گئے ہیں ۔

تفصیلات کے بموجب بہادر پورہ منڈل میں 46 امتحانی مراکز کا قیام عمل میں آیا ہے جب کہ بندلہ گوڑہ منڈل میں 34 امتحانی مراکز موجود رہیں گے اسی طرح چارمینار منڈل میں 30 امتحانات مراکز ہیں اور گولکنڈہ منڈل میں 63 امتحانی مراکز قائم کئے گئے ہیں ۔ ان امتحانی مراکز پر خدمات کی انجام دہی کے لیے تقررات کا عمل بھی تقریبا مکمل کرلیا گیا ہے ۔ ڈسٹرکٹ ایجوکیشنل آفیسر حیدرآباد مسٹر سبا ریڈی کے بموجب 27 مارچ سے شروع ہونے والے یس یس سی امتحانات کے پرامن و شفاف انعقاد کے ساتھ ساتھ طلبہ کے لیے سہولتوں کی فراہمی کے سلسلہ میں بھی جائزہ لیا جارہا ہے ۔ طلبہ کو ا متحانی مراکز تک پہنچانے کے لیے آر ٹی سی کی جانب سے خصوصی بس سہولت کے متعلق بھی بات چیت جاری ہے اور توقع ہے کہ ہر سال کی طرح اس سال بھی آر ٹی سی کی جانب سے امتحانات کے لیے خصوصی بس سرویس چلائی جائے گی ۔ پرانے شہر کے امتحانی مراکز میں خدمات انجام دے چکے ممتحین حضرات نے بتایا کہ بیشتر مراکز میں بنیادی سہولتوں کی عدم موجودگی کے سبب طلبہ کو ہونے والی دشواریوں سے اعلیٰ عہدیداروں کو گذشتہ برسوں کے دوران واقف کروایا جاچکا ہے اور توقع ہے کہ اس مرتبہ ضلع کلکٹر و ڈسٹرکٹ ایجوکیشنل آفیسر کی جانب سے اس خصوص میں ہدایات جاری کی جائیں گی ۔ اولیائے طلبہ کی جانب سے بھی عہدیداروں کی توجہ اس جانب مبذول کروائی گئی ہے ۔

اولیائے طلبہ نے اعلیٰ عہدیداروں سے اپیل کی ہے کہ وہ امتحانی مراکز پر بنیادی سہولتوں جیسے برقی ، پانی اور بیت الخلاء کو یقینی بنائیں ۔ مسٹر سبا ریڈی کے بموجب امتحانی مراکز کے قیام سے قبل تمام عمارتوں کا جائزہ لیا جاچکا ہے اور کسی قسم کی شکایت کی صورت میں بروقت اقدامات کو یقینی بنایا جائے گا ۔ یس یس سی امتحانات کے دوران حسب سابق کیشو میموریل اسکول نارائن گوڑہ میں مرکزی کنٹرول روم قائم کیا جائے گا جہاں سے امتحانات کی راست نگرانی کی جائے گی ۔۔

TOPPOPULARRECENT