Sunday , August 19 2018
Home / شہر کی خبریں / ایس ایس سی امتحانات میں طلبہ کے پکڑے جانے پر ممتحن ، نگرانکار اور ڈی ای او کے خلاف بھی کارروائی

ایس ایس سی امتحانات میں طلبہ کے پکڑے جانے پر ممتحن ، نگرانکار اور ڈی ای او کے خلاف بھی کارروائی

حیدرآباد۔16مارچ(سیاست نیوز) ایس ایس سی امتحانات کے دوران اگر طلبہ نقل نویسی کرتے ہوئے پکڑے جاتے ہیں تو ایسی صورت میں ممتحن‘ نگران اور ڈسٹرکٹ ایجوکیشن آفیسر کے خلاف کاروائی کو یقینی بنایا جائے گا۔ حکومت کی جانب سے جاری کردہ ان احکامات کے بعد شہر کے بیشتر ایس ایس سی مراکز میں سختی برتی جارہی ہے اور امتحانات کے شفاف انعقاد کے لئے تشکیل دیئے جانے والے خصوصی دستہ میں مختلف محکمہ جات کے عہدیداروں کو شامل رکھا گیا ہے۔ بتایاجاتاہے کہ حکومت کی جانب سے کئے جانے والے ان اقدامات کے سبب ممتحن اور نگران امتحانی مراکز میں خوف کی لہر پائی جا رہی ہے اور وہ امتحانی مراکز میں کسی بھی قسم کی بد عنوانی اور نقل نویسی کی شکایت پر خاموشی اختیار کرنے سے گریز کر رہے ہیں۔ محکمہ تعلیم اور ڈائریکٹریٹ آف امتحانات کی جانب سے پہلی مرتبہ بین محکمہ جاتی فلائنگ اسکواڈ کا تجربہ کیا جا رہا ہے اور کہا جا رہاہے کہ یہ تجربہ دو امتحانات کے دوران کافی حد تک کامیاب نظر آرہا ہے کیونکہ اب تک یہ شکایات عام تھی کہ محکمہ تعلیم کے ہی عہدیداروں کے سبب صورتحال میں بہتری نہیں ہو پا رہی تھی۔ ریاستی حکومت نے جو منصوبہ تیار کیا ہے اس منصوبہ کے مطابق نہ صرف شہر حیدرآباد بلکہ ریاست کے تمام اضلاع میںا س طرح کے اسکواڈس کی تشکیل عمل میں لائی جا چکی ہے جس کے سبب اضلاع میں بھی امتحانات کے دوران سختی برتی جارہی ہے۔ عام طور پر یہ شکایات موصول ہو رہی تھیں کہ ریاست تلنگانہ میں صرف شہر ی علاقوں میں امتحانات کے دوران سختی کی جا رہی ہے لیکن اس مرتبہ جو انتظامات کئے گئے ہیں ان انتظامات سے محکمہ تعلیم کے عہدیدار بھی مطمئن ہیں۔ ایس ایس سی امتحانات کے دوران خدمات انجام دینے والے اساتذہ نے بتایا کہ ریاستی حکومت اور محکمہ تعلیم کی جانب سے کئے گئے اقدامات کافی اطمینان بخش نظر آرہے ہیں اور کہا جا رہاہے کہ آئندہ امتحانات کے دوران بھی یہی طریقہ کار اختیار کیا جا نا ضروری ہے تاکہ ریاست تلنگانہ کے ایس ایس سی امتحانات کو مشتبہ ہونے سے بچایا جا سکے۔ کمشنر محکمہ تعلیم کے مطابق جاریہ ایس ایس سی امتحانا ت کے دوران فلائنگ اسکواڈ کے عملہ میں محکمہ پولیس ‘ محکمہ سیول سپلائز‘ محکمہ بلدی نظم و نسق‘ محکمہ تعلیم کی مشترکہ ٹیموں کی خدمات حاصل کی جا رہی ہیں تاکہ طلبہ‘ ممتحن اور نگران کے علاوہ مراکز کی بہتر انداز میں نگرانی کی جا سکے اور امتحانی عمل کو شفاف بنایاجا سکے۔

Top Stories

TOPPOPULARRECENT