Saturday , September 22 2018
Home / شہر کی خبریں / ایس ایس سی امتحانات کا کل آغاز، تمام انتظامات مکمل

ایس ایس سی امتحانات کا کل آغاز، تمام انتظامات مکمل

نقل نویسی کو روکنے سخت اقدامات، کمشنر محکمہ ثانوی اسکول جی کشن کی اخباری نمائندوں سے بات چیت

حیدرآباد 13 مارچ (سیاست نیوز) ریاست تلنگانہ میں امتحانات ایس ایس سی کا 15 مارچ سے آغاز ہوگا۔ ان امتحانات ایس ایس سی کے پرامن و کامیاب انعقاد کو یقینی بنانے کے لئے وسیع تر انتظامات مکمل کرلئے گئے۔ بالخصوص نقل نویسی کا مکمل تدارک کرنے کے لئے جس امتحان ہال میں نقل نویسی کرتے ہوئے طلباء پکڑے جائیں گے، ان امتحان ہال کے انویجلیٹر (ممتحن) کو نہ صرف ذمہ دار ٹھہرایا جائے گا بلکہ طالب علم کے ساتھ ساتھ انویجلیٹر کے خلاف بھی سخت کارروائی کی جائے گی۔ آج اخباری نمائندوں سے بات چیت کرتے ہوئے مسٹر جی کشن کمشنر و ڈائرکٹر ریاستی محکمہ ثانوی (اسکول) ایجوکیشن نے اس بات کا اظہار کیا اور بتایا کہ امتحانات ایس ایس سی کیلئے بھی بالواسطہ طور پر جمبلنگ سسٹم کو روبہ عمل لاتے ہوئے لنگویجس کے امتحانی پرچہ کے دن دیگر مضامین کے اساتذہ کو امتحانی ڈیوٹی پر اور دیگر مضامین کے امتحانی پرچہ کے دن لینگویج ٹیچرس کے ساتھ ساتھ ایس جی ٹی ٹیچرس کو امتحانی ڈیوٹی پر تعینات کرنے کے اقدامات کئے جارہے ہیں۔ انھوں نے کہاکہ فی الوقت جملہ 26 امتحانی مراکز کی نشاندہی کرتے ہوئے ان امتحانی مراکز پر سی سی ٹی وی کیمروں کی تنصیب عمل میں لائی جارہی ہے۔ کمشنر و ڈائرکٹر اسکول ایجوکیشن نے تفصیلات بتاتے ہوئے کہاکہ ریاست کے جملہ 11,103 اسکولس (بشمول سرکاری و خانگی) سے (5,38,867) لاکھ طلباء و طالبات ان امتحانات میں شرکت کریں گے۔ جن میں (2,76,388) طلباء اور (2,62,479) طالبات شامل ہیں۔ امتحانات ایس ایس سی کیلئے ریاست بھر میں جملہ (2,542) امتحانی مراکز قائم کئے گئے ہیں۔

امتحانی مراکز میں کسی بھی نوعیت کی مبینہ بے قاعدگیوں پر کڑی نظر رکھنے کے لئے ڈائرکٹر گورنمنٹ اکزامنیشن سے چار اسپیشل فلائنگ اسکواڈز اور ریاست بھر میں مراکز امتحانات کا معائنہ کرنے کے لئے 148 فلائنگ اسکواڈز تشکیل دیئے گئے ہیں۔ انھوں نے بتایا کہ امتحانات ایس ایس سی میں ایک لاکھ 78 ہزار تلگو میڈیم، تین لاکھ 12 ہزار انگلش میڈیم اور گیارہ ہزار اردو میڈیم طلباء و طالبات کے علاوہ مزید چند دیگر میڈیم کے طلباء و طالبات شرکت کریں گے۔ جبکہ امتحانی اوقات صبح 9.30 بجے سے ہوں گے۔ لیکن طلباء و طالبات سے کم از کم 45 منٹ قبل امتحانی مرکز پر موجود رہنے کی خواہش کی گئی تاکہ طلباء و طالبات قبل از امتحانی وقت اپنے ہال اور بیٹھنے کی جگہ تلاش کرلے سکیں۔ مسٹر جی کشن نے اخباری نمائندوں کے سوال کا جواب دیتے ہوئے کہاکہ ایک یا دو منٹ تاخیر سے امتحانی سنٹرس پر پہونچنے والے طلباء و طالبات کو امتحانی سنٹر میں داخل ہونے سے روک دینے سے متعلق کوئی ایسے احکامات نہیں دیئے گئے تاہم کسی ہنگامی صورتحال کے باعث پانچ منٹ تاخیر سے پہونچنے والے طلباء و طالبات کو امتحان میں شرکت کی اجازت دینے کی تمام امتحانی مراکز کے چیف سپرنٹنڈنٹس کو ضروری ہدایات دی گئی ہیں۔ انھوں نے بتایا کہ تمام امتحانی مراکز پر طلباء و طالبات کے لئے تمام تر بنیادی سہولتیں بشمول پانی کی فراہمی، کسی خلل اندازی کے بغیر برقی فراہمی، سیلنگ فیانس، اے این ایم کی تعیناتی، ٹی ایس آر ٹی سی کی جانب سے خصوصی بسیں چلانے اور ان بسوں میں امتحانی ہال ٹکٹ رکھنے والے طلباء و طالبات کو مفت سفر کی سہولت فراہم کرنے تمام ڈسٹرکٹ ایجوکیشنل آفیسرس و منڈل ایجوکیشن آفیسرس کے علاوہ سخت صیانتی انتظامات کی فراہمی کو یقینی بنانے کے لئے تمام ڈسٹرکٹ سپرنٹنڈنٹس آف پولیس کو بھی ہدایات دی گئیں۔ کمشنر ڈائرکٹر اسکول ایجوکیشن نے مزید بتایا کہ طلباء و طالبات کو امتحانی سنٹر میں سیل فون یا کیلکولیٹرس و کسی بھی نوعیت کے الیکٹرانک اشیاء لیجانے کی ہرگز اجازت نہیں دی جائے گی۔ انھوں نے امتحانات ایس ایس سی میں شرکت کرنے والے تمام طلباء و طالبات سے اپنے سوالات کے پرچہ پر اپنا ہال ٹکٹ نمبر تحریر کرنے کی اور کسی بھی افواہوں وغیرہ پر دھیان نہ دینے کی پرزور خواہش کی۔ انھوں نے مزید بتایا کہ امتحانی پرچوں کی جانچ کا آغاز آئندہ ماہ 2 اپریل سے ہوگا اور نتائج بھی جلد سے جلد جاری کرنے کے اقدامات کئے جائیں گے۔

Top Stories

TOPPOPULARRECENT