Friday , November 24 2017
Home / Top Stories / ایس ایس سی نتائج کا اعلان، 85.63 فیصد طلبہ کامیاب، حیدرآباد سب سے پیچھے

ایس ایس سی نتائج کا اعلان، 85.63 فیصد طلبہ کامیاب، حیدرآباد سب سے پیچھے

حیدرآباد۔ 11مئی (سیاست نیوز) ڈپٹی چیف منسٹر وریاستی وزیرتعلیم مسٹر کڈیم سری ہری نے آج ایس ایس سی نتائج کا اعلان کردیا۔ ایس ایس سی ۔2016کے نتائج کی تفصیلات سے واقف کرواتے ہوئے انہوں نے بتایا کہ ریاست میں کامیاب طلبہ کا فیصد 85.63رہا اور لڑکیوں کو روایتی اعتبار سے لڑکوں پر سبقت حاصل رہی۔ لڑکیوں کی کامیابی کا فیصد 86.57رہا جبکہ 84.70فیصد لڑکوں نے کامیابی حاصل کی۔ اس اعتبار سے لڑکیوں کی کامیابی کا فیصد 1.87اضافہ ریکارڈ کیا گیا ہے۔ مسٹر کڈیم سری ہری نے بتایا کہ جملہ 5لاکھ 55ہزار 265امیدواروں نے امتحانات میں شرکت کی تھی جن میں 5لاکھ 19ہزار 494ریگولر امیدوار اور 35ہزار 771 امیدواروں نے خانگی امیدوار کی حیثیت سے شرکت کی۔انہوں نے بتایا کہ سال گزشتہ 5لاکھ 59ہزار 223 امیدواروں نے شرکت کی تھی۔ ڈپٹی چیف منسٹر نے بتایا کہ سال گزشتہ کی بہ نسبت ریگولر امیدواروں کی تعداد میں 6021امیدواروں کا اضافہ ریکارڈ کیا گیا ہے جبکہ خانگی امیدواروں کی تعداد میں 9979کی گراوٹ ریکارڈ کی گئی ہے۔ضلع واری اساس پر کامیابی کے تناسب کا جائزہ لینے پر اس بات  کا انکشاف ہوا کہ ضلع ورنگل 95.13فیصد کامیابی کے ساتھ ریاست بھر میں سب سے آگے ہے اور شہر حیدرآباد نے 76.23فیصد کامیابی کے حصول کے ساتھ ریاست کے تمام 10اضلاع میں آخری مقام حاصل کیا ہے۔

دوسرے نمبر پر ضلع محبوب نگر ہے جہاں 91.19فیصد طلبہ نے ان امتحانات میں کامیابی حاصل کی ہے۔تیسرے نمبر پر میدک رہا جہاں 90.74فیصد طلبہ کو کامیابی حاصل ہوئی ہے۔شہر حیدرآباد کے بعد سب سے ابتر حالت ضلع رنگا ریڈی کی ہے جہاں 82.07فیصد طلبہ نے کامیابی حاصل کی۔ حیدرآباد میں کامیاب طلبہ کے فیصد میں مجموعی طور پر اضافہ دیکھا گیا سال گزشتہ حیدرآباد میں کامیابی کا فیصد64.8 تھاجو اب 76.23تک پہنچ چکا ہے۔ ایس ایس سی امتحانات میں جملہ 5لاکھ 55ہزار 265امیدواروں نے شرکت کی ہے جن میں 2لاکھ 83ہزار 778لڑکے اور 2لاکھ 71ہزار 487لڑکیاں شامل ہیں۔ مسٹر کڈیم سری ہری نے بتایا کہ سال گزشتہ کی بہ نسبت اس سال کامیاب طلبہ کے فیصد میں زبردست اضافہ دیکھا گیا ہے۔ سال گزشتہ کامیاب طلبہ کا ریاست میں مجموعی فیصد 77.56تھا جبکہ اس مرتبہ اس میں 8.07فیصدکے اضافے کے ساتھ یہ 85.63تک پہنچ گیا ہے۔خانگی امیدواروں کی کامیابی کا فیصد 39.52رہا۔ انہوں نے بتایا کہ جاریہ سال جملہ 11236 اسکولوں کے طلبہ نے امتحانات میں شرکت کی جن میں 10مدارس کا نتیجہ صفر رہا۔ ان میں 8خانگی مدارس کے علاوہ ایک امدادی اسکول اور ایک سرکاری اسکول شامل ہیں۔ زبان دوم میں کامیاب طلبہ کا فیصد 99.54رہا جبکہ حساب کے پرچہ میں کامیابی کا فیصد سب سے کم 88.93ہے۔

TOPPOPULARRECENT