Wednesday , April 25 2018
Home / Top Stories / ایس سی ؍ ایس ٹی کیساتھ بربریت پر مودی خاموش کیوں؟ راہل

ایس سی ؍ ایس ٹی کیساتھ بربریت پر مودی خاموش کیوں؟ راہل

SHIMOGA, APR 3 (UNI):- Congress President Rahul Gandhi during Jan Sampark at Shimoga City in Karnataka on Tuesday. UNI PHOTO-71U

امتحانی پرچے ، اسمبلی انتخابات، ایس سی ؍ ایس ٹی ایکٹ میں ترمیم ، بڑھتے تشدد پر وزیراعظم سے پوچھے سوال
شیموگہ(کرناٹک) ۔ 3 اپریل (سیاست ڈاٹ کام) صدر کانگریس راہل گاندھی نے وزیراعظم نریندر مودی پر وار کرتے ہوئے کہا کہ وزیراعظم دلتوں کے تحفظ پر ایک بھی جملہ کیوں نہیں کہہ رہے ہیں اور وہ ایس سی ؍ ایس ٹی ایکٹ میں ترمیم پر خاموش کیوں ہیں۔ واضح رہے کہ راہل کا یہ بیان شمالی ریاستوں میں گزشتہ ہوئے تشدد کے پیش نظر کرناٹک میں ہونے والے اسمبلی انتخابات کیلئے ایک عوامی میٹنگ کے دوران آیا ہے۔ یاد رہے کہ ایس سی ؍ ایس ٹی ایکٹ میں سپریم کورٹ کے ذریعہ ترمیم کی وجہ سے دلت تنظیموں کے ذریعہ ’’بھارت بند‘‘ احتجاج کا اعلان کیا گیا تھا جس میں تقریباً 9 افراد ہلاک اور سینکڑوں افراد زخمی ہوگئے۔ صدر کانگریس نے وزیراعظم پر طنزیہ انداز میں کہا کہ روہت ویمولہ کا قتل کیا جاتا ہے، گجرات میں دلت ستائے جارہے ہیں۔ گھوڑا رکھنے کی پاداش میں دلت نوجوان کو موت کے گھاٹ اُتارا جارہا ہے، لیکن وزیراعظم کی زبان گنگ ہے۔ دلتوں اور دیگر ٹرائبل شہریوں کے خلاف تشدد میں روز بروز اضافہ ہورہا ہے پھر بھی ایس سی ؍ ایس ٹی تحفظ ایکٹ میں ترمیم کی جارہی ہے اور وزیراعظم ایک بھی لفظ بولنے کو تیار نہیں ہے۔

راہل گاندھی نے اپنی میٹنگ میں کرناٹک میں ایس سی ؍ ایس ٹی کی فلاح و بہبود کی موجودہ صورتحال کو بی جے پی کی اقتدار والی ریاستوں سے کیا اور کہا کہ مودی حکومت کے ذریعہ ایس سی ؍ ایس ٹی کی فلاح و بہبود کے نام پر جتنی رقم مختص کی گئی ہے، اس کی آدھی رقم کرناٹک اکیلے ایس سی ؍ ایس ٹی کی فلاح پر خرچ کرتا ہے۔ راہل نے سی بی ایس سی سوالات کے افشائ، کرناٹک اسمبلی انتخابات کو بی جے پی آئی ٹی سیل کے انچارج امیت مالویہ کے ذریعہ قبل از وقت ٹوئٹ کرنے پر بھی مودی کو آڑھے ہاتھوں لیا اور کہا کہ اس معاملے پر بھی وزیراعظم خاموش رہے۔ انہوں نے کہا کہ ایک طرف جہاں طلبہ کے امتحانات کے سوالات افشاء ہورہے ہیں تو دوسری طرف اسمبلی انتخابات کی تاریخ کا بھی افشا ہورہا ہے۔ راہل کے مطابق مجھے لگتا ہے کہ آر ایس ایس نے مودی کو سکھایا ہے کہ ان کو مزید لیکچرس دینے چاہئیں۔ آر ایس ایس نے انہیں یہ بھی سکھایا ہے کہ کھڑے ہو اور جھوٹ بولو۔ مجھے محسوس ہوتا ہے کہ وزیراعظم اب اس بات کا احساس کررہے ہیں کہ ملک کو لاٹھی، نفرت، تقریروں اور غلط بیانوں اور وعدہ خلافیوں کے ذریعہ مزید نہیں چلایا جاسکتا ہے۔ وزیراعظم پر اپنے طنزیہ فقرے کستے ہوئے راہل گاندھی نے کہا کہ وزیراعظم نے امتحان سے پریشان ہونے والے طلبہ کے لئے کتاب لکھی اور انہیں بتایا کہ امتحان کا سامنا کیسے کیا جائے لیکن جب طلبہ تیار ہوکر گئے تو انہیں یہ کہہ کر واپس کردیا گیا کہ امتحانات ملتوی کردیئے گئے ہیں، لہذا مودی جی کو دوبارہ لیکچر دینے کی ضرورت ہے۔

TOPPOPULARRECENT