Friday , June 22 2018
Home / Top Stories / ایل پی جی سبسیڈی کیلئے آدھار لازمی نہیں ، بینک کھاتے بھی کافی

ایل پی جی سبسیڈی کیلئے آدھار لازمی نہیں ، بینک کھاتے بھی کافی

نئی دہلی ۔ 15 ڈسمبر ۔ ( سیاست ڈاٹ کام ) مرکز نے آج واضح کیا کہ پکوان گیس (ایل پی جی )سلنڈر پر سبسیڈی کی منتقلی کیلئے آدھارکارڈ نمبر لازمی نہیں ہے اور ایل پی جی پر فوائد کی راست منتقلی اسکیم کے تحت بینک اکاؤنٹ کی فراہمی کا اختیار گنجائش موجود ہے۔ وزیر پٹرولیم دھرمیندر پردھان نے لوک سبھا کو مطلع کیا کہ فوائد کی راست منتقلی کے تحت شامل ہونے

نئی دہلی ۔ 15 ڈسمبر ۔ ( سیاست ڈاٹ کام ) مرکز نے آج واضح کیا کہ پکوان گیس (ایل پی جی )سلنڈر پر سبسیڈی کی منتقلی کیلئے آدھارکارڈ نمبر لازمی نہیں ہے اور ایل پی جی پر فوائد کی راست منتقلی اسکیم کے تحت بینک اکاؤنٹ کی فراہمی کا اختیار گنجائش موجود ہے۔ وزیر پٹرولیم دھرمیندر پردھان نے لوک سبھا کو مطلع کیا کہ فوائد کی راست منتقلی کے تحت شامل ہونے والے ایل پی جی کے تمام صارفین گھریلو استعمال کے تمام ایل پی جی سلینڈرس ( جن میں سبسیڈی اور بغیر سبسیڈی کے سلینڈرس بھی شامل ہیں) مارکٹ قیمت پر حاصل ہوں گے اور ہر گھریلو استعمال کے سلینڈر پر دی جانے والی سبسیڈی صارفین کے بینک کھاتوں میں منتقل کی جائے گی ۔ مسٹر پردھان نے وقفہ سوالات کے دوران مزید کہا کہ اسکیم میں شامل ہونے والے ایل پی جی کے ہر صارف کو مستحقہ نقد سبسیڈی کے علاوہ یکمشت اڈوانس بھی فراہم کیا جارہا ہے جو مارکٹ قیمت پر خریدے گئے پہلے سلینڈر پر رقم فراہم کیلئے کیا گیا ہے ۔ انھوں نے کہا کہ پہلے سلینڈر کے بشمول ہر سلینڈر پر علحدہ سبسیڈی قابل ادا ئیگی ہے ۔ وزیر پٹرولیم نے کہا کہ اس اسکیم کے تحت سبسیڈی سے استفادہ کرنے کے دواختیارات دیئے گئے ہیں جس کے مطابق جہاں کہیں آدھار نمبر دستیاب رہے گا وہی سبسیڈی کے طورپر رقم کی منتقلی کا ذریعہ ہوگا ۔ چنانچہ ایل پی جی کے کسی صارف کے پاس اگر آدھار کارڈ موجود ہے تو اُس کو چاہئے کہ وہ آدھارکار نمبر کو اپنے بینک کھاتے اور ایل پی جی کنزیومر (صارف) نمبر سے مربوط کرے۔ وزیر پٹرولیم نے کہا کہ ’’اگر ایل پی جی کے کسی صارف کے پاس آدھار نمبر دستیاب نہیں ہے تو وہ آدھار نمبر کے استعمال کے بغیر اپنے بینک کھاتے میں براہ راست سبسیڈی حاصل کرسکتا ہے ۔ یہ اختیار اسکیم میں ترمیم کے ساتھ اب نافذ کیا گیا ہے جس کا مقصد اس بات کو یقینی بنانا ہے کہ ایل پی جی کے کسی بھی صارف کو محض آدھار نمبر کے نہ ہونے پر سبسیڈی سے محروم نہ رکھا جائے ‘‘ ۔ مسٹر پردھان نے کہاکہ فوائد کی راست منتقلی کی اسکیم کی اضلاع میں نفاذ کی تاریخ سے ایل پی جی کے تمام صارفین کو تین ماہ کی رعایتی مہلت دی گئی ہے ۔ اس دوران تمام صارفین جو ہنوز اس اسکیم میں شامل نہیں ہوسکے ہیں شمولیت کے ساتھ اپنے مستحقہ سبسیڈی گیس سلینڈرس حاصل کرسکتے ہیں۔ تین ماہ کی رعایتی مہلت کے اختتام کے بعد ایسے صارفین کو مزید تین ماہ کی مدت وقفہ ( پارکنگ) دی جائے گی اور مستحق صارفین کے کھاتوں میں سبسیڈی منتقل کی جائے گی اور پارکنگ کی مدت ختم ہونے کے بعد باقی بچ جانے والے تمام فنڈز سوخت ہوجائیں گے اور اس رعایتی مدت کے دوران بھی اسکیم میں شامل نہ ہونے والے صارفین سبسیڈی کے تحت سوخت شدہ فنڈز سے فوائد کی راست منتقلی اسکیم کے حصول کیلئے نااہل ہوجائیں گے ۔

TOPPOPULARRECENT