Thursday , December 14 2017
Home / شہر کی خبریں / ایمبارگیشن پوائنٹ سے روانہ ہونے والے عازمین حج کا انفرادی شیڈول

ایمبارگیشن پوائنٹ سے روانہ ہونے والے عازمین حج کا انفرادی شیڈول

عازمین کو اطلاعات کی فراہمی، سنٹرل حج کمیٹی کو روایت برقرار رکھنے کی نمائندگی
حیدرآباد۔/5 اگسٹ، ( سیاست نیوز) حج 2017 کیلئے سنٹرل حج کمیٹی نے حیدرآباد ایمبارگیشن پوائنٹ سے روانہ ہونے والے عازمین حج کا انفرادی شیڈول جاری کردیا ہے۔ حیدرآباد سے روانہ ہونے والے تلنگانہ، آندھرا پردیش اور کرناٹک کے عازمین حج کو میسیج کے ذریعہ روانگی کے پروگرام کی سنٹرل حج کمیٹی نے اطلاع دے دی ہے۔ جن عازمین کو ابھی تک شیڈول کی اطلاع نہیں ملی وہ متعلقہ حج کمیٹی سے ربط قائم کرسکتے ہیں۔ عازمین کی روانگی کے سلسلہ میں سنٹرل حج کمیٹی پر دباؤ بنایا گیا تھا کہ پہلے مرحلہ میں آندھرا پردیش کے قافلوں کی روانگی کو شامل کیا جائے۔ اطلاع ملتے ہی ڈپٹی چیف منسٹر محمد محمود علی نے سنٹرل حج کمیٹی کے عہدیداروں سے ربط قائم کیا اور روایت سے انحراف نہ کرنے کی ہدایت دی جس کے بعد قدیم روایت کے مطابق پہلے مرحلہ میں تلنگانہ کے عازمین کی روانگی عمل میں آئے گی۔ اسپیشل آفیسر تلنگانہ حج کمیٹی پروفیسر ایس اے شکور نے کہا کہ جملہ 6096 عازمین کا انفرادی شیڈول حاصل ہوچکا ہے ان میں تلنگانہ کے 3324 ، آندھرا پردیش کے 2010 اور کرناٹک کے 762 عازمین شامل ہیں۔ ابھی بعض عازمین کے شیڈول کی اجرائی باقی ہے۔ انہوں نے کہا کہ طئے شدہ پروگرام کے مطابق 13 تا 22 اگسٹ سعودی ایر لائنس کی 14 پروازوں کے ذریعہ عازمین کی روانگی عمل میں آئے گی۔ اس کے علاوہ 18 اگسٹ کو سعودی ایر لائنس کی شیڈول فلائیٹ میں 50 عازمین کو شامل کیا گیا ہے۔ انہوں نے امید ظاہر کی کہ ویٹنگ لسٹ سے مزید منظوری کے حصول کے بعد حیدرآباد سے ایک زائد فلائیٹ روانہ ہوگی۔ انہوں نے کہا کہ 13 اگسٹ کو پہلا قافلہ حج ہاوز سے روانہ ہوگا۔ یہ قافلہ بحالت احرام رات 11 بجے شمس آباد انٹر نیشنل ایر پورٹ کے حج ٹرمنل روانہ ہوگا اور وہاں سے طیارہ کی پرواز رات دیر گئے 2 بجکر 55 منٹ پر ہوگی۔ ابتدائی 7 فلائیٹس یعنی 14 تا 17 اگسٹ تلنگانہ کے عازمین پر مشتمل ہوں گی۔ آٹھویں فلائیٹ تلنگانہ اور کرناٹک کے عازمین پر مشتمل ہوگی۔ 9 تا 12 اگسٹ 3 فلائیٹس آندھرا پردیش کے عازمین پر مشتمل ہوں گی۔ آخری اور 14ویں فلائیٹ تلنگانہ اور کرناٹک کے عازمین کے ساتھ پرواز کرے گی۔ انہوں نے کہا کہ 18 اگسٹ کو شیڈول فلائیٹ میں جن 50 عازمین کو شامل کیا گیا ہے ان کی روانگی حج ٹرمنل کے بجائے مین ٹرمنل سے ہوگی۔ ڈپٹی چیف منسٹر محمد محمود علی عازمین کے پہلے قافلہ کو وداع کریں گے جبکہ دوسرے قافلہ کے وقت چیف منسٹر کے سی آر کی آمد متوقع ہے۔ پروفیسر ایس اے شکور نے بتایا کہ عازمین کو فلائیٹ کے وقت سے 4 گھنٹے قبل ایر پورٹ روانہ کیا جائے گا۔ انہوں نے کہا کہ اس مرتبہ حج کیمپ میں سیکورٹی کے سخت انتظامات رہیں گے اور عازمین کو روانگی کے وقت سے 48 گھنٹے پہلے حج کیمپ میں رپورٹ کرنا ہوگا۔ شہر سے تعلق رکھنے والے عازمین رپورٹنگ کے بعد اپنے سامان کے ساتھ فلائیٹ کے وقت سے 10 گھنٹے پہلے حج ہاؤ پہنچ جائیں۔ حج ہاوز میں تمام ضروری اُمور کی تکمیل کی جائے گی جس میں کسٹمس، ایمیگریشن، لگیج، فارن ایکسچینج شامل ہیں۔ عازمین کو پاسپورٹ اور بورڈنگ کارڈ بھی حج ہاوز میں حوالے کیا جائے گا۔ آر ٹی سی بسوں کے ذریعہ عازمین کی حج ٹرمنل منتقلی عمل میں آئے گی۔ انہوںنے کہا کہ عازمین کو 2100 ریال ادا کئے جائیں گے اور عازمین ہندوستانی کرنسی میں 25000 روپئے یا 5000 ڈالر کے مماثل فارن ایکسچینج لے جاسکتے ہیں۔

Top Stories

TOPPOPULARRECENT