’’این آئی اے سے عوام کا اعتماد اُٹھ رہا ہے ‘‘

بی جے پی حکومت کے قیام کے بعد سے اکثر ملزمین بری ہورہے ہیں : غلام نبی آزاد

نئی دہلی ۔16 اپریل ۔(سیاست ڈاٹ کام) کانگریس کے سینئر لیڈر غلام نبی آزاد نے 2007 ء کے مکہ مسجد دھماکہ کیس میں دائیں بازو کے کارکن سوامی اسیمانند اور دیگر چار ملزمین کو آج عدالت کی طرف سے بری کئے جانے کے بعد اس کیس کی تحقیقات کرنے والی قومی تحقیقاتی ایجنسی ( این آئی اے ) کی کارکردگی پر کئی سوالات اُٹھائے ہیں۔ آزاد نے جو راجیہ سبھا میں اپوزیشن لیڈر بھی ہیں ایک نیوز چینل سے کہاکہ ’’چار سال قبل اس حکومت کے قیام کے بعد سے ہر مقدمہ میں یہ (ملزم بری ) ہورہا ہے ۔( تحقیقاتی) ایجنسیوں پر سے عوام کا اعتماد اُٹھ رہاہے‘‘۔ واضح رہے کہ حیدرآباد کی مکہ مسجد میں 18 ؍ مئی 2007 ء کو نماز جمعہ کے دوران ہوئے دھماکہ کے مقدمہ میں انسداد دہشت گردی کی ایک خصوصی عالت نے آج اسیمانند اور دیگر چار ملزمین کو مصنوبہ الزامات سے بری کردیا جب این آئی اے ان کے خلاف الزامات ثابت کرنے میں ناکام ہوگئی ۔ اس دھماکہ میں 9 افراد ہلاک اور دیگر 58 زخمی ہوئے تھے ۔ عدالتی فیصلے کے بارے میں ایک سوال پر سابق مرکزی وزیر اور سینئر کانگریس لیڈر شیوراج پاٹل نے جواب دیاکہ ’’یہ کہنے میں مجھے کافی دشواری ہورہی ہے کہ آیا یہ صحیح ہے یا غلط ہے ‘‘ ۔ شیوراج پاٹل نے کہاکہ وہ اس تحقیقاتی ایجنسی کی طرف سے داخل کردہ چارج شیٹ کی نوعیت ، گواہوں کے بیانات اور استغاثہ کی طرف سے کی گئی جرح سے واقف نہیں ہیں۔ حیدرآباد سٹی پولیس ابتداء میں اس کیس کی تحقیقات کررہی تھی لیکن 2011 ء میں یہ مقدمہ دہشت گردی کے واقعات کی تحقیقات کرنے والی ملک کے سرکردہ ایجنسی این آئی اے کے سپرد کردیا گیا تھا ۔

TOPPOPULARRECENT