Friday , January 19 2018
Home / ہندوستان / این آر سی پر ممتا بنرجی کا تبصرہ ، دستور کی توہین

این آر سی پر ممتا بنرجی کا تبصرہ ، دستور کی توہین

سپریم کورٹ اور دستور کی توہین کا سیاسی مقاصد پر مبنی تبصرہ ہونے کا وجئے ورگیا کا الزام
کولکاتا 5 جنوری (سیاست ڈاٹ کام) بی جے پی کے قومی جنرل سکریٹری کیلاش وجئے ورگیا نے آج چیف منسٹر مغربی بنگال ممتا بنرجی پر قومی رجسٹر برائے شہریان پر اُن کے تبصرے کو دستور اور سپریم کورٹ کی توہین قرار دیا۔ ممتا بنرجی نے سیاسی مفادات حاصلہ کے ایک حصہ کے طور پر یہ تبصرہ کیا ہے۔ انھوں نے الزام عائد کیاکہ ترنمول کانگریس سرحد پار دراندازی کی حوصلہ افزائی کررہی ہے تاکہ مغربی بنگال میں سیاسی فوائد حاصل کئے جاسکیں۔ قومی شہریوں کا رجسٹر (این آر سی) کو آسام میں جدید ترین بنایا جارہا ہے۔ دستور میں دلچسپی رکھنے والے تمام عناصر، طبقات، تنظیموں، سیاسی پارٹیوں سے مشورہ کیا گیا ہے۔ اِس قسم کے تبصرے نہ صرف دستور اور سپریم کورٹ کی توہین ہے بلکہ ہمارے ملک کے وفاقی ڈھانچے کے جذبہ کی خلاف ورزی بھی ہیں۔ وجئے ورگیا احمدپور میں کل ایک اجلاس سے خطاب کررہے تھے۔ ممتا بنرجی نے مرکز کی بی جے پی زیرقیادت حکومت پر سازش کرنے کا الزام عائد کیا تھا تاکہ آسام سے بنگالی بولنے والے افراد کو قومی شہریوں کے رجسٹر سے خارج کردیا جائے جو 31 ڈسمبر کی آدھی رات کو شائع کیا گیا ہے۔ 1951 ء کا قومی رجسٹر آسام میں سپریم کورٹ کی زیرنگرانی تازہ ترین بنایا جارہا ہے تاکہ ریاست کے حقیقی ساکنوں کی شناخت کی جاسکے اور غیرقانونی تارکین وطن کو خارج کیا جاسکے۔ ممتا بنرجی کے مسلسل احتجاج کا حوالہ دیتے ہوئے مختلف سیاسی پارٹیوں نے نریندر مودی حکومت کی مختلف پالیسیوں کو اِس کا ذمہ دار قرار دیا ہے۔ وجئے ورگیا نے پرزور انداز میں کہاکہ چیف منسٹر مغربی بنگال دیگر ریاستوں سے متعلق معاملات میں دخل اندازی کررہی ہیں۔ حکومت آسام اپنے شہریوں کے تحفظ کے قابل ہے۔ ممتا بنرجی کو خود اپنی ریاست پر توجہ مرکوز کرنی چاہئے اور ہر مسئلہ پر سیاست کرنا ترک کردینا چاہئے۔ آسام کی پولیس نے کل چیف منسٹر مغربی بنگال کے خلاف مرکز پر اُن کے الزامات کے خلاف شکایات کی بنیاد پر ایف آئی آر درج کرلیا ہے۔ ایف آئی آر پر ترنمول کانگریس نے برہمی کا اظہار کیا ہے اور کہاکہ ایسا کوئی بھی اقدام انہیں بنگالیوں کے لئے جدوجہد کرنے سے نہیں روک سکتا۔ بی جے پی نے ممتا بنرجی پر الزام عائد کیاکہ وہ سیاسی مفادات کی خاطر ایک غیر اہم بات کو اہم مسئلہ بنارہی ہیں۔ آسام کی بی جے پی حکومت نے بھی ممتا بنرجی کے بیان کی مذمت کرتے ہوئے اِسے آسام کے عوام کی توہین اور پُرتکبر تبصرہ قرار دیا ہے۔

TOPPOPULARRECENT