Monday , June 18 2018
Home / شہر کی خبریں / این ایس یو آئی انتخابات آمنہ بتول جنرل سکریٹری منتخب ‘ چار مسلمانوں کو شکست

این ایس یو آئی انتخابات آمنہ بتول جنرل سکریٹری منتخب ‘ چار مسلمانوں کو شکست

حیدرآباد /21 اپریل (سیاست نیوز) مسلمانوں میں عدم اتحاد اور تال میل کے فقدان کے سبب کانگریس کی طلبہ تنظیم تلنگانہ این ایس یو آئی کے انتخابات میں صرف آمنہ بتول جاوید جنرل سکریٹری کے عہدہ پر کامیاب ہوئیں، جب کہ باقی چار مسلم نوجوانوں کو شکست ہوئی۔ واضح رہے کہ راہول گاندھی نے یوتھ کانگریس اور این ایس یو آئی کیلئے انتخاب کو لازمی قرار دیا ہے، یعنی کانگریس کی دونوں محاذی تنظیموں میں سفارشات کی بنیاد پر عہدوں پر نامزدگی کی روایت ختم ہوچکی ہے ۔ ریاست کی تقسیم کے بعد آل انڈیا این ایس یو آئی نے تلنگانہ این ایس یو آئی کیلئے 15 اپریل کو انتخابات کروائے اور 20 اپریل کو نتائج جاری کئے۔ یہ نتائج مسلمانوں کیلئے چونکا دینے والے رہے کیونکہ مسلم نوجوانوں نے اس کیلئے کوئی منصوبہ بندی نہیں کی تھی، جسکے نتیجے میں ووٹوں کی تقسیم اور اکثریتی ووٹوں کے حصول میں ناکامی کے باعث جنرل سکریٹری کے عہدہ پر افتخار کو شکست ہوئی۔ سکریٹری کے عہدہ کیلئے تین مسلم نوجوانوں عرفان، عبد المعید اور مجتبیٰ نے مقابلہ کیا اور تینوں کو شکست ہوئی ‘جبکہ خاتون کوٹہ سے جنرل سکریٹری کے عہدہ پر آمنہ بتول جاوید نے کامیابی حاصل کی ۔ تلنگانہ این ایس یو آئی کے صدر کی حیثیت سے بی وینکٹ راؤ، نائب صدور پی مہیپال ریڈی، کے دلیپ ریڈی، پی سدھیر، ایس چندنا کامیاب ہوئے۔ جنرل سکریٹریز ایل پون کمار گوڑ، بی چیتنیا، اجمیرا مہیش اور آمنہ بتول جاوید، سکریٹریز کی حیثیت سے کرن کمار، کے گجپتی، ٹی منی کنٹہ، اے وشنو وردھن ریڈی، ایس سنتوش کمار، وینکٹ سوامی اور بی انو لیکھا کا انتخاب عمل میں آیا۔

TOPPOPULARRECENT