Tuesday , December 18 2018

این ڈی اے حکومت مسرت عالم کی رہائی روک سکتی تھی صدر راج کے دوران کیا گیا فیصلہ : کانگریس

نئی دہلی 11 مارچ (سیاست ڈاٹ کام) کشمیری علیحدگی پسند لیڈر مسرت عالم کی رہائی پر حکومت کو تنقیدوں کا نشانہ بناتے ہوئے اپوزیشن نے آج کہاکہ یہ فیصلہ اُس وقت کیا گیا جبکہ ریاست میں صدر راج نافذ تھا۔ این ڈی اے حکومت اِسے روک سکتی تھی۔ وقفہ صفر کے دوران یہ مسئلہ اُٹھاتے ہوئے جیوتر آدتیہ سندھیا (کانگریس) نے بتایا کہ ڈسٹرکٹ کمشنر نے بتایا ک

نئی دہلی 11 مارچ (سیاست ڈاٹ کام) کشمیری علیحدگی پسند لیڈر مسرت عالم کی رہائی پر حکومت کو تنقیدوں کا نشانہ بناتے ہوئے اپوزیشن نے آج کہاکہ یہ فیصلہ اُس وقت کیا گیا جبکہ ریاست میں صدر راج نافذ تھا۔ این ڈی اے حکومت اِسے روک سکتی تھی۔ وقفہ صفر کے دوران یہ مسئلہ اُٹھاتے ہوئے جیوتر آدتیہ سندھیا (کانگریس) نے بتایا کہ ڈسٹرکٹ کمشنر نے بتایا کہ مبینہ طور پر ریاستی معتمد داخلہ کو مسرت عالم کو محروس رکھنے کے بارے میں مطلع کیا اور بتایا کہ عدالتی احکامات کے مطابق اُنھیں سلاخوں کے پیچھے رکھنے کے لئے تازہ حکمنامہ جاری کرنا ہوگا۔ اُنھوں نے بتایا کہ ضلع حکام نے متعلقہ ایس پی کو یہ ہدایت دی کہ مسرت عالم کو رہا کردیا جائے اور معتمد داخلہ کو اِس بارے میں مطلع کیا جبکہ ریاست میں صدر راج نافذ تھا۔ اُنھوں نے کہاکہ اگر مرکز چاہتا تو تازہ حکمنامہ کی اجرائی کو یقینی بنایا جاسکتا تھا۔ اِس طرح مسرت عالم کو مزید محروس رکھنا ممکن تھا۔ اُنھوں نے کہاکہ مرکز یا تو اِس معاملہ میں غافل تھا یا پھر وہ ریاستی انتظامیہ کے ہاتھوں کھلونا بن گیا۔

TOPPOPULARRECENT