Sunday , November 19 2017
Home / سیاسیات / ایوان کی پُرسکون کارروائی کیلئے اپوزیشن سے تعاون طلبی

ایوان کی پُرسکون کارروائی کیلئے اپوزیشن سے تعاون طلبی

مرکزی وزراء کا اجلاس ، حکومت کی حکمت عملی کو قطعیت
نئی دہلی ۔ 24 نومبر (سیاست ڈاٹ کام) پارلیمنٹ کے جمعرات سے شروع ہونے والے سرمائی پارلیمانی سیشن سے قبل سرکردہ وزراء نے حکومت کی حکمت عملی طئے کرنے کیلئے آج تفصیلی تبادلہ خیال کیا اور مرکز نے امید ظاہر کی کہ بشمول جی ایس ٹی مختلف کلیدی اصلاحات بلز کی بہ آسانی منظوری کیلئے کانگریس بھی حکومت سے تعاون کرے گی۔ وزرائے داخلہ، امورخارجہ، دفاع اورپارلیمانی امور راجناتھ سنگھ، ارون جیٹلی، سشماسوراج، منوہر پاریکر اور وینکیا نائیڈو نے حکومت کی حکمت عملی کو قطعیت دینے کیلئے اجلاس میں شرکت کی۔ پارلیمانی امور کے مملکتی وزیر مختار عباس نقوی نے جو اجلاس میں شریک تھے، کہا کہ حکومت کا ایجنڈہ پرسکون انداز میں ایران کی کارروائی چلانا ہے اور اپوزیشن تک رسائی حاصل کرتے ہوئے تمام بلز منظور کروانا ہے۔ انہوں نے کہا کہ سینئر وزراء راجناتھ سنگھ، ارون جیٹلی اور وینکیا نائیڈو اور دوسروں نے مختلف اپوزیشن قائدین سے بات چیت کے ذریعہ اس ضمن میں تعاون طلب کیا ہے۔ نقوی نے کہا کہ ’’ہمیں امید ہے کہ اصلاحات کے اہم بلز کی منظوری کے لئے ہمیں کانگریس سے تعاون حاصل ہوگا‘‘۔ بشمول چند مالیاتی بلز، 38 اہم بلز پارلیمانی منظوری کی منتظر ہیں۔ کلیدی جی ایس ٹی بل بھی پارلیمانی میں منظوری کی منتظر ہیں اور حکومت کو توقع ہیکہ سرمائی اجلاس میں یہ بل منظور کرلی جائے گی۔ اپوزیشن جماعتوں سے تعاون طلبی اور حلیفوں سے بات چیت کے لئے حکومت نے کل 11 بجے دن کل جماعتی اجلاس طلب کی ہے۔ بعدازاں وزیراعظم کی رہائش گاہ پر بی جے پی پارلیمانی عاملہ کے علاوہ این ڈی اے حلیفوں کا اجلاس منعقد ہوگا۔

TOPPOPULARRECENT