Friday , May 25 2018
Home / ہندوستان / ایودھیا مسئلہ پرہر ایک کیلئے کامیابی کی کوشش: روی شنکر

ایودھیا مسئلہ پرہر ایک کیلئے کامیابی کی کوشش: روی شنکر

مولانا توقیر رضا خان سے ملاقات ، کل ہند مسلم پرسنل لاء بورڈ سے موقف تبدیل کرنے کی اپیل
بریلی ۔ /6 مارچ (سیاست ڈاٹ کام) مذہبی رہنما سری سری روی شنکرجو ایودھیا تنازعہ کی ثالثی کے ذریعہ یکسوئی کی کوشش کررہے ہیں کہا کہ وہ چاہتے ہیں کہ تنازعہ کے تمام فریقین کیلئے کامیابی کی صورتحال پیدا کریں ۔ وہ ترشونل ایرویز بریلوی پر پہونچے تھے ۔ انہوں نے الکھناتھ مندر کا دورہ کیا اور لارڈ شیوا کی پوجا کی ۔ درگاہ اعلیٰ حضرت کا دورہ کیا اور چادر پیش کی۔ انہوں نے اتحاد ملت کونسل کے صدر مولانا توقیر رضا خان سے ملاقات کی اور کہا کہ مقدمہ کے تمام فریقین کیلئے کامیابی کی صورتحال پیدا کرنے کی کوشش کررہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ رام مندر کی تعمیر ہونا ضروری ہے ۔ مسجد کی بھی تعمیر کی جانی چاہئیے۔ دونوں فریقین کو خوش بھی ہونا چاہئیے۔ اس سلسلے میں راہ ہموار کرنے کا کام جاری ہے اور ہم ہر ایک کی کامیابی چاہتے ہیں ۔ اپنے سابقہ تبصرے کا حوالہ دیتے ہوئے روی شنکر نے کہا کہ انہوں نے شام کا نام بطور مثال لیا تھا ۔ یہ ایک نقطہ نظر تھا دھمکی نہیں ۔ دھمکی دینے کا کوئی مطلب بھی نہیں ہے اور وہ خواب میں بھی ایسی بات نہیں سوچ سکتے ۔ انہوں نے کہا کہ ہم امن چاہتے ہیں ۔ فرقہ وارانہ ہم آہنگی کا ماحول چاہتے ہیں ۔ انہوں نے احساس ظاہر کیا کہ آج کل دیگر ممالک جیسی صورتحال ہمارے ملک میں پیدا نہیں ہونی چاہئیے ۔ انہوں نے کہا کہ ایک مندر متنازعہ مقام پر پہلے ہی سے موجود ہے اور ہم مل بیٹھ کر بات کرسکتے اور تنازعہ کی یکسوئی کرسکتے ہیں ۔ بنگلور سے موصولہ اطلاع کے بموجب انہوں نے کہا کہ کل ہند مسلم پرسنل لاء بورڈ کو اپنا موقف تبدیل کرنا چاہئیے اور بابری مسجد ۔ رام جنم بھومی تنازعہ کی عدالت سے باہر یکسوئی پر غور کرنا چاہئیے ۔ پرسنل لاء بورڈ کو اس سلسلے میں اپنا موقف تبدیل کرنا ہوگا ۔

TOPPOPULARRECENT