Tuesday , December 12 2017
Home / Top Stories / ایڈز سے متاثرہ یتیم بچوں میں ملبوسات کی تقسیم

ایڈز سے متاثرہ یتیم بچوں میں ملبوسات کی تقسیم

AGAPE کی ممکنہ مدد کرنے جناب زاہد علی خاں کا اعلان ، چپلیں اور بلانکٹس فراہم کرنے فیض عام ٹرسٹ اور ہیلپنگ ہینڈ کا فیصلہ
حیدرآباد ۔ 24 ۔ نومبر : ( سیاست نیوز ) : بچوں کی معصومیت ، ان کی معصوم شرارتیں مسکراہٹیں اور لب و لہجہ ہر کسی کا دل موہ لیتے ہیں ۔ کہتے ہیں کہ بچے جھوٹ نہیں بولتے ۔ ان میں دکھاوا نہیں ہوتا ۔ ان کے دل آئنہ کی طرح صاف ہوتے ہیں ۔ وہ مکرو فریب مکاری چاپلوسی خود غرصی کی بیماریوں سے پاک رہتے ہیں ۔ یہی وجہ ہے کہ بچوں کو ننھے فرشتے کہا جاتا ہے ۔ یہ تو رہی عام بچوں کی بات لیکن جن بچوں کے ماں باپ نہیں ہوتے ۔ جن کے سروں پر والدین کی شفقت کا سایہ نہیں ہوتا وہ معاشرہ کی محبت کے حقیقی مستحق ہوتے ہیں ۔ یہ سوچ کر ہر ذی حس اور انسانیت دوست انسان کا دل دہل جاتا ہے کہ یتیم و یسیر بچے اپنے مرحوم والدین کی کمی محسوس کرتے ہیں تو ان کا کیا حال ہوتا ہوگا ۔ ہمارے پیارے نبی ﷺ نے ہمیشہ یتیموں و یسیروں پر شفقت فرمائی ہے اور ان کے ساتھ حسن سلوک کیا ہے ۔ چنانچہ وہ لوگ یقینا اللہ تعالیٰ کے نیک بندے ہیں جو یتیموں کے سر پر شفقت کا ہاتھ رکھتے ہیں انہیں اپنے سینے سے لگا کرا ن کی پیشانی چومتے ہیں ۔ ان کی ضروریات کا خیال رکھتے ہیں ۔ ایڈیٹر سیاست جناب زاہد علی خاں کی قیادت میں سیاست ملت فنڈ فیض عام ٹرسٹ AGAPE اور ہیپلنگ ہینڈ کے ایک وفد نے بوڈ اوپل میں واقع ایک یتیم خانہ کا معائنہ کرتے ہوئے وہاں پرورش پارہے یتیم و یسیر بچوں کے سر پر شفقت کا ہاتھ رکھا ۔ ان کی دلجوئی کی اور ان میں کپڑا بینک کے ملبوسات کی تقسیم عمل میں آئی ۔ تقریبا دو گھنٹے اس وفد نے جس میں فیض عام ٹرسٹ کے جنرل سکریٹری و ٹرسٹی جناب افتخار حسین ، منیجنگ ایڈیٹر سیاست جناب ظہیر الدین علی خاں ، ڈاکٹر شوکت علی مرزا صدر ہیلپنگ ہینڈ اور ٹرسٹی فیض عام ٹرسٹ جناب رضوان حیدر شامل تھے بچوں کے ساتھ گذارے ان سے بات چیت کی ۔ اس یتیم خانہ (Ambassadors Of Goodwill For Aids Patient Every Where) اے جی اے پی ای کے بارے میں ہم آپ کو سب سے اہم بات یہ بتاتے ہیں کہ اس میں جملہ 211 بچے ہیں جن میں کی نصف تعداد ایچ آئی وی / ایڈس سے متاثر ہے یا ایسے بچے ہیں جن کے ماں باپ ایڈز سے متاثر ہو کر اس دنیا سے رخصت ہوچکے ہیں ۔ AGAPE کی ایک اور اہم خاص بات یہ ہے کہ اسے ایک امریکی خاتون Lynne Voggu چلا رہی ہیں ۔ وہی AGAPE کی بانی اور منیجنگ ڈائرکٹر بھی ہیں ۔ ڈاکٹر رتنم واگو کے ساتھ شادی کے بعد وہ امریکہ سے سال 2000 میں ہندوستان منتقل ہوگئیں وہ اپنے شوہر اور بیٹے جیمس کے ساتھ ایچ آئی وی ایڈز سے متاثرہ بچوں کی خدمت میں مصروف ہوگئیں ۔ ایڈیٹر سیاست نے اے جی اے پی ای میں بچوں سے خطاب بھی کیا اور کہا کہ ادارہ سیاست ، فیض عام ٹرسٹ اور ہیلپنگ ہینڈ اپنے طرز کے اس منفرد یتیم خانہ کی ممکنہ مدد کریں گے ۔ ایڈیٹر سیاست نے Lynne Voggu سے کہا کہ وہ اس یتیم خانہ کی مالی امداد کے لیے چیف منسٹر کے سی آر سے نمائندگی کروائیں گے ۔ انہوں نے یتیم و یسیر بچوں کی بہتر انداز میں نگہداشت کے لیے Lynne Voggu کی ستائش کی اور کہا کہ ایڈز سے متاثرہ مرد و خواتین سے لوگ دور بھاگتے ہیں لیکن یہاں Lynne Voggu ایک ماں کی طرح ان یتیم بچوں کی دیکھ بھال کررہی ہیں ۔ یہ خدمت خلق کی بہترین مثال ہے ۔ اس موقع پر جناب افتخار حسین نے فیض عام ٹرسٹ کی جانب سے ان بچوں میں چپلیں تقسیم کرنے کا اعلان کیا جب کہ ڈاکٹر شوکت علی مرزا نے ہیلپنگ ہینڈ کی جانب سے ان بچوں کو بلانکٹس فراہم کرنے کا اعلان کیا ۔۔

TOPPOPULARRECENT