Friday , December 15 2017
Home / شہر کی خبریں / اے پی خصوصی موقف پر یقین دہانی کا وزیر اعظم سے کانگریس کا مطالبہ

اے پی خصوصی موقف پر یقین دہانی کا وزیر اعظم سے کانگریس کا مطالبہ

مطالبہ اسپیکر نے مسترد کردیا ، وائی ایس آر کانگریس کا احتجاج جاری
نئی دہلی ۔ 8 ۔ اگست : ( پی ٹی آئی ) : ریاست آندھرا پردیش کو خصوصی موقف کے مطالبہ کو لے کر لوک سبھا میں وائی ایس آر کانگریس پارٹی کے احتجاج پر کانگریس نے ریاست اے پی کو خصوصی موقف پر وزیر اعظم نریندر مودی سے تیقن دینے کی خواہش کی جس کو اسپیکر نے مسترد کردیا ۔ لوک سبھا میں وائی ایس آر کانگریس کے ارکان مسلسل چھٹویں روز آندھرا پردیش کو خصوصی موقف کے مطالبہ پر نعرے بلند کرتے ہوئے احتجاج کررہے تھے ۔ وائی ایس آر ارکان ایوان کے وسط میں جمع ہو کر ہاتھوں میں پلے کارڈس تھامے احتجاج کررہے تھے جب کہ اسپیکر انہیں اپنی نشستوں پر واپس جانے کی درخواست کی ۔ وقفہ صفر کے دوران کانگریس قائد ملیکارجن کھرگے نے کہا کہ وائی ایس آر ارکان مسلسل اس موضوع کو اٹھاتے ہوئے ایوان کی کارروائی میں خلل پیدا کررہے ہیں ۔ اس پر اسپیکر ایوان سمترا مہاجن نے اس بات سے متفق ہوتے ہوئے احتجاجی ارکان سے اپنی نشستوں پر واپس چلے جانے کی درخواست کی ۔ ملیکارجن کھرگے نے کہا وزیر اعظم مودی کو ایوان میں حاضر ہوتے ہوئے احتجاجی ارکان کو یقین دہانی کروانی چاہئے جس طرح کہ ان کے پیشرو وزیراعظم منموہن سنگھ نے آندھرا پردیش کو خصوصی موقف پر یقین دہانی کروائی تھی ۔ تاہم اس موقع پر اسپیکر نے اس کو مسترد کرتے ہوئے کہا کہ ہر کسی کی جانب سے وزیر اعظم کو ایوان میں طلب کرنا غیر ضروری ہے جب کہ وزیر فینانس ارون جیٹلی اس تعلق سے ایوان میں بیان دے چکے ہیں ۔ بتایا گیا ہے وائی ایس آر کانگریس کے ارکان لوک سبھا میں پچھلے پیر سے ریاست اے پی کو خصوصی موقف عطا کئے جانے کے متعلق ہاتھوں پلے کارڈس تھامے ہوئے نعرے لگاتے ہوئے ایوان کے وسط میں جمع ہو کر مسلسل احتجاج کررہے ہیں ۔ ابتدائی دو دنوں کے دوران اس احتجاج میں وائی ایس آر کانگریس ارکان کے ساتھ تلگو دیشم ارکان نے بھی حصہ لیا تھا تاہم بعد ازاں تلگو دیشم ارکان نے خود کو احتجاج میں شریک ہونے سے روک لیا ۔۔

TOPPOPULARRECENT