Tuesday , October 16 2018
Home / شہر کی خبریں / اے پی میں راجیہ سبھا کی تین نشستوں کیلئے سرگرمیوں میں شدت

اے پی میں راجیہ سبھا کی تین نشستوں کیلئے سرگرمیوں میں شدت

۔5 مارچ کو انتخابی اعلامیہ کی اجرائی ‘ ارکان اسمبلی کو خریدنے کی کوشش ‘ تلگودیشم پر جگن کا الزام
امراوتی ۔ 25؍ فبروری ( پی ٹی آئی) آندھراپردیش میں حکمراں تلگودیشم پارٹی پر اپوزیشن وائی ایس آر کانگریس نے ریاست میں اپریل کے دوران مخلوعہ ہونے والی راجیہ سبھا کی تمام تین نشستوں پر کامیابی حاصل کرنے کے لئے اس کے چند ارکان اسمبلی کو خریدنے کی کوشش کا الزام عائد کیا ہے ۔راجیہ سبھا کی تین نشستوں کے لئے 23 مارچ کو انتخابات ہوں گے ۔ اسمبلی میں عددی قوت کے اعتبار سے تلگودیشم کو دو اور وائی ایس آر کانگریس کو ایک نشست پر کامیابی ہوسکتی ہے ۔ لیکن وائی ایس آر کانگریس کے پاس اب صرف 44 ارکان رہ گئے ہیں ۔ کیونکہ 22 ارکان انحراف کے ذریعہ تلگودیشم میں شامل ہوچکے ہیں ۔ اس طرح حکمران جماعت اگر وائی ایس آر کانگریس کے دو ارکان کو اپنی طرف راغب کرلیتی ہے تو وہ (تلگودیشم کو ) تمام تین نشستوں پر کامیاب ہوسکتی ہے ۔ وائی ایس آر کانگریس کے رکن پارلیمنٹ کا کہنا ہے کہ اس کے چند ارکان اسمبلی کو تلگودیشم پارٹی خریدنے کی کوشش کر رہی ہے ۔ راجیہ سبھا کی تیسری نشست پر قبضہ کی کوشش کے طور پر ہماری پارٹی سے چند ارکان کا انحراف کروانے کی سرگرمیوں میں شدت پیدا کر چکی ہے ۔ انہوں نے چند دن قبل اس ضمن میں الیکشن کمیشن سے شکایت بھی کی تھی ۔ وائی ایس آر کانگریس نے ضلع نیلور کے صنعتکار ویمی ریڈی پربھاکر ریڈی کو اپنا امیدوار نامزد کرنے کا اعلان کیا ہے ۔ ان الزامات کے سبب تلگودیشم کو یہ دعوی کرنے پر مجبور ہونا پڑا کہ تیسرے امیدوار کی باتیں محض قیاس پر مبنی ہیں ۔ تلگودیشم پولیٹ بیورو کے ایک رکن نے کہا کہ تیسرے امیدوار کی باتیں محض قیاس آرائی ہے ہم دو نشستوں پر کامیابی حاصل کریں گے ۔ ہم اپنے منصوبہ کا بہت جلد رسمی اعلان کریں گے ۔ راجیہ سبھا انتخابات کا 5مارچ کو اعلامیہ جاری ہوگا ‘ پرچہ نامزدگی داخل کرنے کی آخری تاریخ 12 مارچ ہے اور ضروری ہو تو 23 ؍ مارچ کو رائے دہی ہوگی ۔

TOPPOPULARRECENT