Friday , September 21 2018
Home / شہر کی خبریں / اے پی میں ہزاروں سرکاری ملازمین تنخواہوں سے محروم

اے پی میں ہزاروں سرکاری ملازمین تنخواہوں سے محروم

مرکز سے فنڈس کی عدم اجرائی اور کمپیوٹر سافٹ ویر کے مسائل

امراوتی۔ 15 اپریل (پی ٹی آئی) آندھرا پردیش میں ایک طرف نقدی کی قلت اور تو دوسری طرف تیکنیکی رکاوٹوں کے نتیجہ میں تقریباً ایک ماہ سے ہزاروں کروڑ روپئے کے بلس لیت و لعل کا شکار ہوگئے ہیں۔ سرکاری ذرائع کے مطابق زائد از 22,000 سرکاری ملازمین ہنوز ماہ مارچ کی تنخواہ حاصل نہیں کرسکے ہیں جبکہ محکمہ فینانس کے حکام ان رکاوٹوں کو ختم کرنے کیلئے شب و روز کی مساعی میں مصروف ہیں۔ مزید برآں آندھرا پردیش میں سافٹ ویر مسائل کے سبب اس ماہ ایک ہفتہ کی تاخیر سے یعنی 7 اپریل کو تنخواہیں اور وظائف ادا کئے گئے۔ اس ریاست میں 7.9 لاکھ سرکاری ملازمین اور وظیفہ یاب ہیں۔ کمپیوٹر سافٹ ویر کے مسئلہ کے علاوہ مرکز کی طرف سے فنڈس کی عدم اجرائی بھی تنخواہوں اور وظائف کی ادائیگی میں تاخیر کی ایک اہم وجہ بتائی گئی ہے۔ محکمہ فینانس کے ایک سینئر عہدیدار نے کہا کہ ’’ہمہ مقصدی پولاورم پراجیکٹ کے لئے تقریباً 3,000 کروڑ روپئے اور پسماندہ اضلاع کہ ترقیاتی گرانٹ کے تحت 350 کروڑ روپئے جاری کئے گئے جس سے ہماری ادائیگیوں کا موقف متاثر ہوا ہے چنانچہ مختلف وجوہات کے تحت مجموعی طور پر 8,000 کروڑ روپئے کی ادائیات روک دی گئیں۔

TOPPOPULARRECENT