Sunday , December 17 2017
Home / شہر کی خبریں / بائیکر ثناء اقبال کی موت پر شکوک و شبہات کا اظہار

بائیکر ثناء اقبال کی موت پر شکوک و شبہات کا اظہار

واقعہ کی اعلی سطحی تحقیقات پر زور ، شمیم خان کی پریس کانفرنس
حیدرآباد /25 اکٹوبر ( سیاست نیوز ) بائیکر ثناء اقبال کی موت کو ان کے رشتہ دار قتل اور ایک بڑی سازش قرار دے رہے ہیں ۔ بتایا جاتا ہے کہ سماج میں خودکشی اور ذہنی تناؤ کے خلاف شعور بیداری کی مہم چلانے والی اس بائیکر ثناء اقبال کی اچانک مشتبہ موت سے سماجی اور انسانی حقوق حلقوں میں سنسنی پھیل گئی ۔ بتایا جاتا ہے کہ اس خاتون کی والدہ جو ایک مشہور وکیل بھی ہیں نے اپنے بیان میں کئی ایک خدشات اور شبہات کا اظہار کیا ہے اور اس کیس کی تحقیقات کا مطالبہ کیا ہے ۔ الحسنات کالونی ٹولی چوکی کی ساکن محترمہ شمیم خان کا کہنا ہے کہ ثناء کو ان کے شوہر ندیم نے رات دیر گئے زبردستی اپنے ساتھ لے گیا وہ راضی نہیں تھی اور نہ ہی اپنے دو سالہ بچے کو رات دیر گئے تنہا چھوڑ جانا اس کو پسند تھا ۔ لیکن ندیم کے ظلم و جبر سے عاجز آکر ان کی لڑکی اپنے شوہر کے ساتھ گئی اور حادثے میں اس کی ہلاکت ہوئی ۔ انہوں نے کہا کہ کار کی حالت جائے مقام کا مشاہدہ اور حالات کو دیکھتے ہوئے اس بات کا اندازہ لگایا جاسکتا ہے کہ حادثہ جان بوجھ کر کیا گیا ۔ محترمہ شمیم نے سنسنی خیز انکشاف کرتے ہوئے کہا کہ حادثہ اور ان کی بیٹی کی نعش کو دیکھنے کے بعد پتہ چلتا ہے کہ ان کی لڑکی کو پہلے قتل کیا گیا اور پھر بعد میں منصوبہ بند طریقہ سے کار کے ذریعہ حادثہ کرواکر توجہ ہٹانے کی کوشش کی گئی ۔ انہوں نے اپنے داماد پر الزام لگایا کہ اس نے منصوبہ بند طریقہ سے ایک سازش کے تحت ان کی بیٹی کا قتل کیا ہے ۔ انہوں نے سارے واقعہ کی اعلی سطح تحقیقات کا مطالبہ کیا ہے اور انصاف ملنے تک جدوجہد جاری رکھنے کا عزم کیا ۔ اس سلسلہ میں نارسنگی پولیس نے کہا کہ پولیس تمام شبہات اور الزامات کو بھی تحقیقات کے زاویہ میں لے لیا ہے اور تحقیقات جاری ہے ۔

TOPPOPULARRECENT