Wednesday , October 24 2018
Home / ہندوستان / بابری مسجد شہادت میں کانگریس کا ہاتھ !

بابری مسجد شہادت میں کانگریس کا ہاتھ !

پارٹی خود کو سیکولرجماعت قرار دینے کا حق نہیں رکھتی :پرکاش کرت
ممبئی۔ 10 ڈسمبر (سیاست ڈاٹ کام) ایودھیا میں 1992ء کو بابری مسجد کی شہادت کا بظاہر حوالے دیتے ہوئے کہ سی پی آئی (ایم) کے سینئر لیڈر پرکاش کرت نے آج دعویٰ کیا کہ اُس وقت کی نرسمہا راؤ حکومت ہی نے بابری مسجد کی شہادت کو روکنے کیلئے کوئی قدم نہیں اٹھایا اور کارسیوکوں کے خلاف بھی کوئی کارروائی نہیں کی۔ کانگریس پر شدید تنقید کرتے ہوئے بائیں بازو کے سینئر لیڈر نے کہا کہ پارٹی کی سیکولرازم کمزور پڑچکا ہے۔ وہ خود کو سیکولر پارٹی قرار دینے کے حق سے محروم ہوچکی ہے۔ کانگریس خود کو سیکولر پارٹی قرار نہیں دے سکتی۔ وہ سیکولر ہونے کا دعویٰ تو کرتی ہے لیکن اس کا یہ دعویٰ کمزور ہے۔ ہم جانتے ہیں کہ بابری مسجد شہادت کے دوران کیا ہوا تھا، مَیں وہاں پر موجود تھا اور وہاں پیش آنے والے واقعات سے پوری طرح واقف ہوں۔ کانگریس کی نرسمہا راؤ حکومت نے بابری مسجد شہادت کو روکنے کیلئے کوئی کارروائی نہ کرنے کا فیصلہ کرلیا تھا۔ یہ تاریخ کا گھناؤنا اور سیاہ باب ہے کہ کانگریس خود کو ہنوز سیکولر ثابت کرنے کی کوشش کررہی ہے۔

TOPPOPULARRECENT