Saturday , December 16 2017
Home / جرائم و حادثات / بابری مسجد یوم شہادت کے پیش نظر پولیس کی سخت سیکوریٹی

بابری مسجد یوم شہادت کے پیش نظر پولیس کی سخت سیکوریٹی

حساس علاقوں میں زائد فورس ، نئی حکمت عملی کے ساتھ صورتحال پر نظر
حیدرآباد ۔ 5 ۔ دسمبر : ( سیاست نیوز ) : بابری مسجد شہادت کی 23 ویں برسی کے موقع پر پولیس نے شہر بھر میں سخت چوکسی اختیار کرلی ہے اور سخت ترین صیانتی انتظامات کیے گئے ہیں ۔ ماضی کے واقعات اور تجربات کو مدنظر رکھتے ہوئے پولیس نے پرانے شہر میں نئی حکمت عملی اختیار کرتے ہوئے حساس و انتہائی حساس علاقوں کو عملاً اپنی گرفت میں لے لیا ہے ۔ اس کے علاوہ کمونیل روڈی شیٹرس کو پولیس نے پابند کردیا اور کسی بھی قسم کی غیر سماجی حرکت پر انہیں سخت گیر نتائج کا انتباہ دیا گیا ہے ۔ جب کہ کمشنر پولیس حیدرآباد نے 7 دسمبر تک شہر میں امتناعی احکامات کونافذ کرتے ہوئے احکامات جاری کردئیے ۔ اس خصوص میں ڈی سی پی ساوتھ زون مسٹر ستیہ نارائنا نے بتایا کہ زائد پولیس کو طلب کرلیا گیا ہے اور تمام علاقوں میں چوکسی اختیار کرلی گئی ہے ۔ انہوں نے باور کرتے ہوئے کہا کہ بند منانے کے لیے زبردستی کرنے اور خوشی کا اظہار کرتے ہوئے امن کو بگاڑنے والوں کو کسی صورت بخشا نہیں جائے گا ۔ انہوں نے بتایا کہ سٹی پولیس کے لیے شہر کا امن اور عوام کی حفاظت اہم ہے اور اس میں خلل پیدا کرنے اور امن کو بگاڑنے والوں کے خلاف پولیس کارروائی کرے گی ۔ ڈی سی پی ساوتھ زون نے بتایا کہ پولیس شرپسند عناصر کے علاوہ سوشیل میڈیا پر بھی خصوصی توجہ مرکوز کئے ہوئے ہے۔ انہوں نے عوام کو پولیس کی جانب سے بھر پور اطمینان دیتے ہوئے کہا کہ وہ کسی بھی قسم کی افواہوں پر دھیان و توجہ نہ دیں ۔ بالخصوص سوشیل میڈیا پر بھی بغیر تحقیق اپنی توجہ مرکوز نہ کریں ۔ انہوں نے کہا کہ کل اتوار کے پیش نظر پرانے شہر میں سیاحوں کی آمد بھی بڑی تعداد میں رہے گی تاہم پولیس نے سیاحوں کے علاوہ ہر شہری کے تحفظ پر خصوصی توجہ دی ہے ۔ انہوں نے دعویٰ کیا کہ 6 دسمبر پرامن طور پر گذر جائے گا ۔ ڈی سی پی ساوتھ زون نے بتایا کہ کل پرانے شہر میں پولیس انتظامات کی نگرانی ایک آئی جی سطح کے عہدیدار کو دی گئی ہے جب کہ ڈپٹی کمشنر پولیس سطح کے دو عہدیدار ، ایڈیشنل ڈی سی پی سطح کے 5 عہدیدار ، 50 سرکل انسپکٹر اور 150 سب انسپکٹر کے علاوہ 1200 فورس تلنگانہ اسپیشل پولیس کے 20 پلاٹونس ، ریاپیڈ ایکشن فورس ، سنٹرل ریزرو پولیس فورس ، کوئیک ریاکشن ٹیم بھی موجود رہیں گے ۔ اس کے علاوہ پولیس نے جدید ٹکنالوجی کی پولیس گاڑیوں کو استعمال کرنے کا فیصلہ کیا ہے ۔ تاکہ کسی بھی قسم کے ناخوشگوار واقعہ پر فوری قابو پایا جاسکے ۔ تاہم انہوں نے دعویٰ کرتے ہوئے کہا کہ حیدرآباد سٹی پولیس کسی بھی قسم کے ہنگامی حالات کا سامنا کرنے تیار اور بہ صلاحیت فورس رکھتی ہے ۔ انہوں نے شہریوں سے درخواست کی کہ وہ پولیس کے ساتھ مکمل تعاون کریں ۔ ۔

TOPPOPULARRECENT